تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین جلد۔3(3790.02#)

جلال الدین سیوطی
جلال الدین محلی
محمد نعیم دیو بندی
دار الاشاعت، کراچی
359
12565 (PKR)

قرآن مجید پوری انسانیت کے لیے کتاب ِہدایت ہے، او ر اسے یہ اعزاز حاصل ہےکہ دنیا بھرمیں سب سے زیاد ہ پڑھی جانے والی کتاب ہے ۔ اسے پڑھنے اور پڑھانے والوں کو امامِ کائنات نے اپنی زبانِ صادقہ سے معاشرے کے بہتر ین لوگ قراردیا ہے اور اس کی تلاوت کرنے پر اللہ تعالیٰ ایک ایک حرف پرثواب عنایت کرتے ہیں۔ دور ِصحابہ سے لے کر دورِ حاضر تک بے شمار اہل علم نے اس کی تفہیم وتشریح اور ترجمہ وتفسیرکرنے کی خدمات سر انجام دی ہیں۔ اصحاب رسول رضوان اللہ علیہم، نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے فیض تربیت، قرآن مجید کی زبان اور زمانۂ نزول کے حالات سے واقفیت کی بنا پر، قرآن مجید کی تشریح، انتہائی فطری اصولوں پر کرتے تھے۔ چونکہ اس زمانے میں کوئی باقاعدہ تفسیر نہیں لکھی گئی، لہٰذا ان کے کام کا بڑا حصہ ہمارے سامنے نہیں آ سکا اور جو کچھ موجود ہے، وہ بھی آثار او رتفسیری اقوال کی صورت میں، حدیث اور تفسیر کی کتابوں میں بکھرا ہوا ہے۔ زیر تبصرہ کتاب "تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین" دسویں صدی ہجری کے امام جلال الدین عبد الرحمن بن ابو بکر السیوطی﷫ اور امام جلال الدین محلی ﷫دونوں کی مشترکہ تصنیف ہے، جس کا اردو ترجمہ محترم مولانا محمد نعیم استاذ تفسیر دار العلوم دیو بند نے کیا ہے۔ یہ کتاب سات ضخیم جلدوں پر مشتمل ہے اور دار الاشاعت کراچی کی مطبوعہ ہے۔ اللہ تعالی سے دعا ہے کہ وہ مولف اور مترجم کی اس محنت کو اپنی بارگاہ میں قبول فرمائے اور ان کے میزان حسنات میں اضافہ فرمائے۔۔آمین(راسخ)

عناوین

صفحہ نمبر

                                                        پارہ             یعتذرون

11

آیت میں منا فقین کے حلف کی دو غرضین اور تین حکم جمع کرنے کی توجیہ

13

مسلمانوں اور کافر و منافقین دیہاتیو ں میں فرق

13

صحابہ ، تابعین ،تبع تابعین میں درجہ بدرجہ فرق مراتب

19

تبوک میں نہ جانے والے صحابہ کی دو قسمیں

20

چند تحقیقات

20

مسجد ضرار کا واقعہ

20

صاحب مدارک کی رائے پر تنقید

21

کیا منافقین کو مرنے کے بعد راحت مل جائے گی

21

ایک علمی شبہ کا ازالہ

21

جہاد مستقل ایک فضیلت ہے مگر ان ان خوبیو ں سے اور سونے پر سہاگہ ہو گیا

25

حضرت ابراہیم ّ کا   اپنے مشرکین والدین کے لیے استغفار

26

اب بھی مشرک لوگوں   کے لیے استغفار جائز ہے یانہیں

26

اب بھی مشرک لوگوں کے   لیے آنحضرتﷺ کی توبہ کا مطلب

26

جہاد ضرورت کے موقعہ پر فی نفسہ فرض کفایہ ہے

31

ترتیب جہاد

32

عرش کی عظمت

32

چاند کی گردش اور اس کی منزلیں

36

دین کی بنیاد وحی و رسالت پر ہے

37

توحید ربوبیت سے توحید الوہیت پر استدلال

37

آواگون او ر آخرت کے نظریہ میں فرق ہے تناسخ پر قرآن سے استدلال غلط ہے

38

مہینہ اور سال کا حساب

38

ایک اشکال کے دو جواب

42

توحید ایک فطری بات ہے

43

شکر اور ناشکری کی حالت

43

دعا ء مایو سی کے ساتھ کیسے جمع ہو سکتی ہے

43

دو آیتو ں میں تعارض

43

جواب

43

نیچریو ں پر رد

43

صداقت محمدی ﷺ کی دلیل

44

شریر ترین انسان

44

رد شرک

44

بتوں کا سفارشی ہو نا غلط ہے

44

راحت و مصیبت میں انسان کی حالت کا فرق

48

دنیا کی حالت سے انسان فریب کا شکا ر ہو جاتا ہے

48

غافل انسان

49

بت پرستی سے بتوں کی بے خبری

49

دو شبہوں کا ازالہ

55

حق کا مدار اور بقاء کسی خاص شخص پر نہیں ہے

56

شک کی چبھن

56

قرآن کریم کی چار خو بیاں

61

ہر چیز اصل میں   مباح ہے

61

معتزلہ کے استدلال کی جوا ب

62

صداقت ا بنیاء کی وزنی دلیل

67

حضرت نوحّ کی نبوت آنحضرت ﷺ کی طرح عام نہیں تھی

67

دعوت کے تین پہلو

68

نبی کے مقابلہ میں یا   خود نبی بننے میں جادوگر کامیاب نہیں ہو سکتا

68

حضرت موسی پر ایمان لانے والے کون تھے

68

کسی نئی بات کے ماننے کی امید جوانوں سے جتنی ہو تی ہے بوڑھو ں   سے نہیں ہوتی

69

توکل اور مکان اور مسجد بنانے کا مطلب

69

مسجد البیت

69

قبولیت دعا کا اثر

70

بد دعاء

70

فرعون کا ایمان لانا

70

فرعون کی نجات

71

قرآن میں شبہ اور اہل علم سے پوچھنے کا مطلب

75

قوم یونس کا حال

75

رفع تعارض

76

ایک عظیم الشان حقیقت

76

کھراکھرا جواب

76

کھری کھری باتیں

76

دین میں زبردستی

77

توکیل اور تذکیر کا فرق

77

زبر دستی تبلیغ   نہیں کی جا سکتی

77

مختلف قوموں کا تاریخی ذکر

81

قرآن کی باریکیاں

81

                                                             وما من دا بۃ

83

علم الہی سے کوئی چیز بھی باہر نہیں

90

قرآن کے چیلنج میں تدریج

91

جیسے سب کفار کی نیت صرف دنیا ہی کمانا نہیں ہوتی ایسی ہی سب مسلمانوں کی نیت میں خالص آخرت

 

نہیں ہوتی

91

آیت سے دو حکم اور ان پر شبہات مع جوابات

91

عمل اور پاداش میں برابری

92

حضرت نوح ّ کی دعوت کا جواب

95

حضرت نوح ّ کا جواب

95

انکار کرنے والوں کا رد عمل

96

غریب اور کم درجہ کے لوگ ہی پہلے ہدایت قبول کرتے ہیں

96

مخالفین حق کا انجام

101

حضرت نوح ّ کی دعوت کا میدان

101

طوفان نوح محدود تھا یا عالمگیر

101

طوفان نوح کے عام ہو نے پر بعض اشکالات کے جوابات

102

پہلا شبہ اور جواب

102

دوسرا شبہ اور جواب

102

تیسراشبہ کے تین جواب

102

واقعہ نوح کا تتمہ اور چند نکات

102

حضرت ہودّ کی دعوت کا جواب

108

حضرت ہودّ کا جواب الجواب

108

مشرکین توحید پر ربوبیت سے بےخبر نہ تھے مگر توحید الوہیت سے نا آشنا تھے

108

قوم کا رد عمل

108

حضرت صالح ّ کا وعظ

108

قوم کا جواب

108

عوام اتباع حق کو قابل   پیشوائی نہیں سمجھتے بلکہ اپنی رائے کے موافق پیروی کرانا چاہتے ہیں

108

حضرت ابراہیم ّ و لوط کا باہمی تعلق

113

قدرت کا تماشہ

113

خوف طبعی نبوت کے منافی نہیں ہے

113

شروع میں توجہ نہیں ہوئی مگر بعد میں فراست نبوت سے فرشتوں کو پہچان لیا

114

قوم کی بہو بیٹیا ں نبی کی اولاد ہوتی ہیں

114

انقلاب او ر پتھراؤ

114

اشکال کے تین حل

114

طبعی تقاضے کمال کے منافی نہیں ہوتے

114

حضرت شعیب ّ کی دعوت و تبلیغ

117

قوم کا جواب

118

حضرت شعیب ّ کا جواب الجواب

118

مقام مدین ک

118

مخالفت انبیا ء کی اصل نباء

118

نامنصفانہ راہ کا آخری جواب

118

اللہ تعالی کی مہلتیں بھی عذاب کی گردش سے نہ بچا سکیں

125

اس سورۃ کی مواعظت کی ما حصل

125

واقعات بیان کرنے سے قرآن کا مقصود

126

اولاد یعقوب

132

تورات کا بیان

132

داستان یوسف ّ بہترین قصہ ہے

132

طرز بیان کی کی خصوصیت

133

حضرت یوسف ّ اور ان کے   بھائیوں کا خواب کی تعبیر سے واقف ہونا

133

حضرت یوسف ّ سے زیا دہ محبت ہونے کی وجہ

133

کھیل کود کا حکم

134

صبر جمیل

134

خون آلود کرتے نے فریب پر پردہ ڈالنے کی بجائے سارے جھوٹ کی قلعی کھول دی

134

تورات کا بیان

135

یوسف ّ کی تدبیر یں عزت کا زینہ بن گئیں

140

یوسف و زلیخا تورات کی نظر میں

140

حضرت یوسف کی پاکدامنی

140

زلیخا کا محل

141

ایک بچے کی شہادت معتبر ہے یا نہیں

141

قدیم تمدن کی ترقی

142

تورات کا بیان

145

دربار ی خواب کی تعبیر سے واقف نہیں تھے

147

تورات کا بیان

147

                                                         وما ابرئ نفسی

149

حضرت یوسف ّ کی براءت اور بادشاہ مصر کی درخواست

155

تورات کا بیان

156

حضرت یوسفّ کی زندگی کے دو دور

156

تورات کا بیان

157

تقدیر پر تدبیر غالب نہ آ سکی

157

اشکالا ت وجوابات

157

تقدیر کے سامنے تدبیر کی کچھ پیش نہ چل سکی

158

برادران یوسف ّ کی مصر میں دوبارہ آنا اور بنیامین کا ملاپ

164

ایک شبہ کا جواب

165

شاہ مصر ایمان لایا تھا یا نہیں

165

حضرت یوسفّ نے   غیر شرعی عہد قبول کیوں کیا

165

بردران یوسف ایک دفعہ پھر آزمائش میں پڑ گئے

166

زبان کے تیر و نشتر

166

حضرت یعقوب ّ کا بیٹوں پر دھوکا دہی کا الزام صحیح تھا یا غلط

166

نئے زخم سے پرانا زخم ہرا ہو جاتا ہے اور ٹپس بڑھ جاتی ہے

167

حضرت یوسفّ کا پیمانہ صبر چھلک گیا

167

برادران یوسفّ نے صدقہ خیرات کی درخواست کیسے کی

167

اللہ والوں کی نظر دو ر رس اور دور نین ہوتی ہے

173

بھائیو ں کی معافی   تلافی

174

بچھڑے ہوؤں کا   ملاپ

174

سجدہ تعظیمی کی حقیقت اور حکم

174

اشتیاق موت

175

آنحضرت ﷺ کے پاس پچھلے واقعات

175

معلوم کرنے کا ذریعہ وحی کے علاوہ دوسرا کو ئی نہیں تھا

180

خلا صہ سورت

180

قرآن کی حقانیت

181

قدرت الہی کے تین درجے

181

زمین پر قدرت الہی کی نشانیاں

181

تاثیر کے لیے فاعل کے ساتھ جو ہر قابل کا ہونا ضروری ہے

182

اقرار آخرت عجیب نہیں بلکہ انکا ر   آخرت   عجیب تر ہے

182

انسان اچھائی کی طرح برائی کے چاہنے میں بھی جلد باز ہے

182

اللہ کا علم واندازہ اور قانون قدرت

187

حفاظت اور حوادث

187

اللہ کی ناراضی اس کی نافرمانی کے بغیر ہوتی کو ئی برائی بھی حقیقی برائی نہیں ہے کہ اس

 

میں اچھائی کا نشان بھی نہ ہو

187

شریعت کا بیان صحیح ہے یا فلسفہ ٹھیک کہتا ہے

189

ربوبیت سے الوہیت پر اصرار

189

بقاء نفع کا قانون اور اس کی دو مثا لیں

189

شان نزول

189

نیکیوں اور نیکوں کا اعزاز

195

مشرکین بھی آسمان میں خداکی کوئی شریک نہیں مانتے

199

ایک اشکال کا حل

200

شان نزول

204

ہر پیغمبر پیام الہی اپنی قومی زبان میں پیش کرتا ہے

205

قوم اور امت کا فرق

205

قرآن صرف عربی زبان میں کیوں نازل کیا گیا

205

صبرو شکر

206

قدرت کے اصول اٹل ہیں

206

خدا کی ہستی میں شک کرنا ایسا ہے جیسے خود اپنی ہستی میں شک وشبہ کرنا

207

جہنمیوں کا حا ل پتلا ہو گا

212

آخرت میں کفار کی نجات کی کو ئی صورت نہیں ہو گی

212

دنیا میں مفید چیز ہی برقرار رکھی جا تی ہے

212

آخرت میں جھوٹی پیروی کارآمد نہیں ہوگی

213

ایک اشکا ل کا حل

213

بھلائی کی طر ف بڑوں ہی کو آگے بڑھنا چاہیے

217

ربوبیت ہی دلیل معبودیت ہے

217

مادی اور شرعی اسباب یکجا ہو سکتے ہیں یا نہیں

218

خدا کی بے شمار نعمتیں

218

مشرکین مکہ کی نا شکری

218

حضرت ابراہیم ّ کی پانچوں دعائیں مقبول

219

مشرکین کے حق میں دعاء ابراہیمی

219

قیامت میں زمین و آسمان بدل جائیں گے

223

           پارہ   14               ربما

227

قرآنی روشنی

231

قرآنی اعجاز

231

حفاظت قرآنی

232

شبہات کا جواب

232

آسمانی بارہ برج

232

جمال فطرت کی جلوہ گری

232

شیطانوں کا چوری چھپے   آسمانی خبریں سننا

233

دو شبہات کا جواب

233

آنحضرت کی بدولت شیا طین آسمان سے روک دیئے گئے

233

شبہات کے اسباب

234

بارش کا سبب

234

زمین کا گول ہونا

234

زمینی چیزوں کا طبعی تناسب

234

خدائی مقررہ نظام

235

زندگی اور موت کا اندازہ

235

انسان و شیطان کی پیدائش میں حکمت

240

دو شبہوں کا جواب

240

خصائص جنات

240

جہنم کے سات دروازے

241

قوم لوط پر عذاب کا وقت

246

خدا کی طرف سے قسموں کا استعمال

246

ایکہ اور مدین اور حجر پر عذاب

246

برائی سے درگزر کرنا

247

حکم الہی کی برتری

247

سورہ فاتحہ قرآن کا نچوڑ ہے

247

نماز میں سورہ فاتحہ پڑھنے کا طریقہ

247

ایک شبہ اور اس کا جواب

248

پریشانی کا علاج

248

عذاب الہی کا انتظار

248

قدرت الہی کا کرشمہ

255

زینت و آرائش اور فخر و تکبر میں فرق

256

پرستش کے لائق   کون ہے ؟

256

زمین گھومتی ہے یا ٹھہری ہو ئی ہے ؟

256

خدا کے انعامات انگنت اور بے شمار ہیں

257

گناہ کی تاثیر سے زیا دہ ہلاکت انگیز ہے

261

وحی الہی کے   متعلق ماننے اور نہ ماننے والوں کا رد عمل

261

آیت وحدیث میں تعارض

262

انسان کو کسی بات پر مجبور نہیں کیا گیا

262

آخر ت کا عقیدہ کو ئی انوکھا خیا ل نہیں تھا

263

خدا کا ارادہ کن فیکونی

263

اسلام میں سب سے پہلی ہجرت

266

سائے بھی قدرت الہی   کے عجائبات میں سے ہیں

266

مختلف قسم کی آفتیں

267

فرشتے دیوتا اور دیویوں ہیں یا خدا تعالی کی بیٹیاں

270

عورتوں کی نسبت مشرکین کا متضاد خیال

270

دختر کشی کی رسم

271

خدا تعالی انسانی تصور کی گرفت سے باہر ہے

271

قانون امہال

271

عقل کی در ماندگی اور وحی کی وسعت

271

دودھ ایک بہتر ین نعمت ہے

277

غلاظت و خون کے بیچ میں سے دودھ کی نہر نکلتی ہے

277

پھلوں کی پیداواری

277

دوائیں

278

شہد بیمایوں کے لیے شفاہے

278

شہد کی مکھی قدرت الہی کا نمونہ ہے

278

مٹھائی کی تاریخ

279

سب روزی کے یکساں مستحق ہیں

279

اللہ تصور کی گرفت سے باہر ہے

279

اللہ ہی اپنی صحیح تمثیل بیان کر سکتا ہے

279

علم و عقل کی روشنی میں

283

بخشائش ا لہی

284

آیت کی جامعیت

290

عدل و انصاف

290

محا سن اخلاق

290

عہد کی پابندی یا عہد شکنی

290

زمانہ جا ہلیت اور وفائے عہد پاکیزہ زندگی

291

بہتر ین بستی بد ترین بستی بن گئی

297

حرام و حلال کرنے کا حق صرف اللہ تعالی کو ہے

297

خلیل اللہ کی راہ

298

دعوت حق کا طریقہ

298

دینی راہ دنیوی راہ کیطرح جھگڑے اور دنگے کی راہ نہیں ہے

298

کٹ حجتی قرآن کا طریقہ نہیں ہے

299

بدلہ لینے کی اجازت اور اس کی حد

299

قرآنی اصطلاح معقو لی اصطلاح سے بدلی ہو ئی ہے

299

     پارہ   15       سبحان الذی

303

واقعہ معراج کی تفصیل

312

معراج اور اسراء کا حکم

312

آنحضرت ﷺ کو جسمانی معراج ہوئی ہے یا خوابی اور روحانی ؟

312

جسمانی معراج پر نقلی اشکالات

313

جسمانی معراج پر عقلی اشکالات

314

معراج میں تجلی الہی ہو ئی یا نہیں ؟

315

نبی اسرائیل کی سر کو بی کے واقعات

317

آیت کی دوسری توجیہ

318

انسان بھلائی برائی   میں امتیاز نہیں کرتا

323

بھلائی برائی نتیجہ اعمال ہے

324

امراء کی کثرت   تباہی کا پیش خیمہ ہو تی ہے

324

انسان دو طرح کے ہوتے ہیں

324

ماں باپ کے حقوق

325

قرابت داروں کے حقوق

325

اسراف و تبدیذ کا فرق

325

میانہ روی

326

دختر کشی اور عام انسانی قتل

330

بلا تحقیق علمدرآمد نہیں کرنا چاہیے

331

دلیل امتناعی سے اثبات   توحید

331

کائنات کی ہر چیز تسبیح کرتی ہے

331

کائنات ہستی سراسر حسن وجمال ہے

332

ایک شبہ کا جواب

332

آیت و حدیث میں تعارض کے شبہ کا جواب

332

ابتدائی زندگی سے اخروی زندگی پر استدلال

333

نرم کلامی مؤثر ہوتی ہے

338

سخت کلامی کا نقصان

338

مصلح صرف داعی ہوتا ہے نہ کہ ذمہ دار

339

مشیت اور قانون الہی

339

واقعہ معراج اور زقوم درخت کے فتنہ ہو نے کا مطلب

339

شرف انسانی

340

اعمال نامے داہنے ہاتھ میں یا بائیں ہا تھ میں ہوں گے

343

توفیق الہی کی بدولت آنحضرت ﷺ سازشوں کا شکار نہیں ہو سکے

343

آیت سے متعلق واقعات

344

آنحضرت ﷺ اور امت کے بارہ میں تہجد کا حکم

345

مقام محمود کی تشریح

345

روح سے کیا مراد ہے

348

روح کی حقیقت وحی کے علاوہ کسی اور طریقہ سے معلوم ہو سکتی ہے یا نہیں

349

علم انسانی کی حد

349

ذکر جنات کی وجہ

349

دو خاص گمراہیاں

349

بے سرو پافرمائشیں

349

قرآن کا جواب

350

اصلی جواب کا رخ

350

رسول کا پیغام حق

350

ایک لطیف تمثیل

350

انسان کی ہدایت کا کام انسان ہی کر سکتا ہے

351

چند شبہوں کا جواب

351

کٹ حجتی سے فرمائشی معجزات قطعا کار آمد نہیں ہوتے

351

کفار کی فرمائشیں   راستبازی کی نیت سے نہیں تھیں

351

حقیقی معنی بننے کی صورت میں مجاز اختیا ر کرنے کی کوئی ضرورت نہیں

352

دفع تعارض

352

اخروی زندگی کی دلیل

352

رحمت سے مراد نبوت بھی ہو سکتی ہے

352

حدیث ترمذی سے آیت کا بظاہر تعارض

359

سجدہ میں گر نے سے کیا مراد ہے

359

دنیا میں بہت سے اختلاف محض لفظی جنگ کی حیثیت رکھتے ہیں

359

اللہ اور رحمن کا مصداق ایک ہی ہے

359

جہری نماز میں زیا دہ زور سے نہ پڑھنے کی دو مصلحتیں

360

اس کتاب کی دیگر جلدیں

اس مصنف کی دیگر تصانیف

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈوانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین: 1877
  • اس ہفتے کے قارئین: 13890
  • اس ماہ کے قارئین: 34277
  • کل مشاہدات: 43578177

موضوعاتی فہرست

ای میل سبسکرپشن

محدث لائبریری کی اپ ڈیٹس بذریعہ ای میل وصول کرنے کے لئے ای میل درج کر کے سبسکرائب کے بٹن پر کلک کیجئے۔

رجسٹرڈ اراکین

ایڈریس

        99--جے ماڈل ٹاؤن،
        نزد کلمہ چوک،
        لاہور، 54700 پاکستان

       0092-42-35866396، 35866476، 35839404

       0092-423-5836016، 5837311

       library@mohaddis.com

       بنک تفصیلات کے لیے یہاں کلک کریں