#213

مصنف : حافظ مبشر حسین لاہوری

مشاہدات : 15503

اللہ اور انسان

  • صفحات: 184
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 3680 (PKR)
(اتوار 01 نومبر 2009ء) ناشر : مبشر اکیڈمی،لاہور

مصنف نے اس کتاب میں معاشرتی برائیوں کی طرف توجہ دلاتے ہوئے ہر کی قباحت اور شرعی حکم کو بیا ن کیا ہے- ان معاشرتی بداخلاقیوں اور کبیرہ گناہوں کو مختلف ابواب کے تحت بیا ن کیا ہے-مصنف نے کتاب کو موضوعات کے اعتبار سے سات مختلف ابواب میں تقسیم کرنے کے ساتھ ساتھ ہر باب کو مختلف فصول میں تقسیم کیا ہے-مصنف نے اپنی کتاب میں جن موضوعات کا احاطہ کیا ہے وہ اجمالا درج ذیل ہیں:حیا کی فضیلت و اہمیت،شرک و تکبیر سے اجتناب،زبان کی حفاظت،جھوٹ وغیبت سے اجتناب اور نقصانات،گالی گلوچ سے اجتناب،پردے کا احکام،حرام مال سے اجتناب،حرام مال کے مختلف ذرائع،مدارس کے مال اور مختلف خیراتی اداروں کے مال کو خرچ کرنے میں احتیاط کو مدنظر رکھنا،دنیا کی محبت ،مال کی محبت اور بخل سے اپنے آپ کو بچانے کی ضرورت واہمیت،سخاوت اور مہمان نوازی کی اہمیت وفضیلت،بغض وعداوت سے بچتے ہوئے تزکیہ نفس کی ضرورت واہمیت کو بیان کرنے کے ساتھ ساتھ اس چیز پر زور دیا گیا ہے کہ انسان کو ہروقت اپنی موت کو یاد رکھنا چاہیے-اس کے علاوہ بے شمار شاندار موضوعات کو زیر بحث لایا گیا ہے-
 

عناوین

 

صفحہ نمبر

پیش لفظ از قلم مصنف

 

11

حرف آغاز حافظ محمد ادریس صاحب (ڈائریکٹر ادارہ معار ف اسلامی منصورہ

 

14

تقدیم از قلم پروفیسر عبد الجبار شاکر صاحب (ڈائر یکٹر بیت الحکمت لاہور

 

15

باب نمبر 1: اللہ جل جلالہ ایک تعارف

 

 

پہلی فصل:  کیا اللہ جل جلالہ موجود نہیں ؟

 

21

نباتات کون اگاتا ہے ؟

 

22

جمادات اور کائنات کو کس نے پیدا کیا ہے ؟

 

24

انسان اور حیوانات کا خالق کون ہے ؟

 

27

کائنات کی کوئی چیز بھی خود بخود پیدا نہیں ہوتی ؟

 

28

بغیر منتظم کے کوئی نظام نہیں  چلتا

 

28

کائنات کا مدبرو منتظم صرف ایک ہی ہے

 

29

ایک سے زیادہ خداؤں کا وجود محال ہے

 

31

اللہ نظر کیوں نہیں آتا ؟

 

32

اللہ کو کس نے پید ا کیا  ؟

 

34

دوسری فصل:  مختلف مذاہب کا تصور الہ

 

35

یہود و نصاری کا تصور الہ ( خدا)

 

36

یہودو نصاری نے اللہ کی شان یکتائی کے حصے کر دیے

 

37

موجودہ بائبل اور تصور توحید

 

41

موجودہ بائبل اور تصور خدا

 

43

ہندو مت اور تصور الہ

 

43

دنیا میں موجود دیگر ادیان و مذاہب

 

45

مشرکین عرب کا تصور خدا

 

45

بت پرستی

 

46

ملائکہ پرستی

 

47

جنات پرستی

 

47

تیسری فصل : اسلام کا تصور الہ

 

49

اللہ تعالی کا تعار ف

 

49

اللہ تعالی کی ذات بابرکات

 

50

اللہ تعالی کے چہرہ مبارک کا تذکرہ

 

51

اللہ تعالی کے مبارک ہاتھو ں کا تذکرہ

 

51

اللہ تعالی کی بابرکت آنکھوں کا تذکرہ

 

52

اللہ تعالی کے پاؤں مبارک کا تذکرہ

 

53

اللہ تعالی کی پنڈلی مبارک کا تذکرہ

 

54

اللہ تعالی کہاں ہے ؟

 

54

اللہ تعالی کے قرب و معیت کا مسئلہ

 

57

چوتھی فصل : اللہ جل جلالہ کا دید ار دنیا میں ممکن ہے ؟

 

60

آخرت میں اللہ تعالی کا دیدار

 

62

کیا آنحضرتﷺنے اللہ تعالی کا دیدار کیا تھا ؟

 

63

اختلاف کا پہلا سبب

 

63

اختلاف کا دوسرا سبب

 

66

آنحضرت ﷺکا فیصلہ

 

67

رؤیت باری تعالی اور بعض ضعیف روایات

 

69

حالت خواب میں اللہ تعالی کا دیدار

 

70

پانچویں فصل: اللہ جل جلالہ کے بارے میں گمراہانہ نظریات

 

72

(1) ہر چیز اللہ تعالی ہے معاذ اللہ

 

72

(2) سب کچھ اللہ کا پرتو ہے (نظریہ وحدۃ الشھود )

 

72

(3) اللہ تعالی انسان کی ذات میں اتر آتے ہیں ( حلول و اتحاد ) معا ذ اللہ

 

73

وحدۃالوجود  وحدت الشہود اور حلول و اتحاد (خلاصہ )

 

73

عقیدہ حلول و اتحاد کی تردید

 

73

عقیدہ وحدت الوجود کی تردید

 

76

عقیدہ وحدت الشہود کی تردید

 

77

وحدۃلوجود اور شہود اور حلول کے اثبات کے دلائل کی حقیقت

 

78

باطل نظریات کی تائید میں بنائی گئی چند جھوٹی احادیث

 

78

آیات قرآنی اور صحیح احادیث سے غلط استدلال

 

79

چھٹی فصل: اللہ جل جلالہ کے اسمائے حسنی کا بیان

 

81

قرآن و حدیث سے اسمائے حسنی بیان کرنے کا اصول

 

83

قرآن و حدیث سے ثابت شدہ بعض اسماء

 

84

کیا خدا اللہ کا نام ہے

 

85

باب نمبر 2: انسان ایک تعارف

 

 

پہلی فصل: انسانی تخلیق کا آغاز اور نظریہ ارتقاء

 

88

نظریہ ارتقاء پر اعتراضات

 

89

نظریہ ارتقاء اور مغربی مفکرین

 

92

پہلے انسان یعنی حضرت آدم ﷣کی تخلیق

 

93

حضرت آدم ﷣مٹی سے پیدا ہوئے

 

94

قرآن مجید کے دلائل

 

94

احادیث کے دلائل

 

96

حضرت آدم ﷣ نوے فٹ لمبے تھے

 

97

حضرت آدم ﷣جمعہ کے روز پیدا ہوئے

 

99

حضرت حوا علیھا السلام کی تخلیق

 

100

مولانا مودودی ؒ کی رائے

 

101

راجح موقف

 

102

دوسری فصل:  انسانوں کی تخلیق اور ان سے عہد

 

103

نسلی انسانی کی تخلیق اور الست بربکم کا عہدو پیمان

 

103

کیا یہ عہد صرف روحوں سے لیا گیا تھا ؟

 

105

کیا یہ عہد مجازی اور تمثیلی تھا ؟

 

105

ہمیں یہ عہد کیوں یاد نہیں ؟

 

108

انسانوں کی تخلیق کے مراحل

 

111

باب نمبر 3: اللہ جل جلالہ اور انسان کے باہمی تعلقات کی بنیادیں

 

 

پہلی فصل:  پہلا تعلق خالق اور مخلوق کا

 

114

سب کچھ ایک اللہ ہی نے پیدا کیا ہے

 

115

ہم انسانوں کو بھی اللہ ہی نے پیدا کیا ہے

 

117

ہمارا رازق اور داتا بھی اللہ ہی ہے

 

118

تمام جانداروں کا رزق اسی اللہ کے ذمہ ہے

 

119

رزق اللہ دے گا ڈرو نہیں

 

119

وہ جسے جتنا چاہے رزق عطا کرے

 

119

سارے خزانے اسی کے پاس ہیں

 

120

مدبر و منتظم بھی اللہ تعالی ہی ہے

 

120

عالم الغیب بھی اللہ تعالی ہی ہے

 

121

قادر مطلق بھی اللہ تعالی ہی ہے

 

121

مختار کل اور مالک الملک (شہنشاہ ) بھی اللہ تعالی ہے

 

122

حاکم اعلی بھی اللہ تعالی ہے

 

122

نفع اور نقصان بھی اللہ تعالی کے ہاتھ میں ہے

 

122

زندگی اور موت بھی اللہ تعالی کے ہاتھ میں ہے

 

123

اللہ تعالی مردوں کو کیسے زندہ کریں گئے ؟

 

124

صحت اور شفا بھی اسی اللہ تعالی کے ہاتھ میں ہے

 

125

اولاد دینا یا نہ دینا بھی اللہ ہی کے اختیار میں ہے

 

125

قسمت کا مالک بھی صرف اللہ تعالی ہے

 

125

اچھے کا م کی توفیق بھی اللہ تعالی ہی دینے والا ہے

 

126

ہدایت دینا بھی صرف اللہ تعالی کے اختیار میں ہے

 

126

مشرکین مکہ اور موجودہ کلمہ گو مسلمان

 

126

مشرکین مکہ بھی اللہ کو خالق مالک اور رازق تسلیم کرتے تھے

 

126

پھر انہیں کافر مشرک کیوں کہا گیا ؟

 

128

غیر اللہ کی عبادت (تعظیم و محبت اور خوف کی وجہ سے )

 

129

مشرکین صرف بتوں کی عبادت نہیں کرتے تھے

 

130

مشرکین کا عقیدہ تھا کہ اللہ نے بعض نیک بندوں کو مافوق الاسباب

 

131

مشرکین مکہ کے عقائد کی تردید

 

132

مشرکین مکہ سخت تنگی میں صرف ایک اللہ کو پکارتے تھے

 

135

ابو جہل کے بیٹے عکرمہ کا واقعہ

 

137

دوسری فصل:  دوسرا تعلق عابد اور معبود کا !

 

138

عبادت کیا ہے ؟

 

139

عبادت کیسے کی جائے ؟

 

141

اصل توحید توحید عبادت ہے

 

143

توحید عبادت کی بنیادی صورتیں

 

144

عبادت کی پہلی صورت : زبانیں عبادتیں

 

145

(1) مددکے لیےایک اللہ ہی سےدعا وفریاد کی جائے

 

145

حضرت آدم ﷣کی دعا

 

147

حضرت نوح ﷣کی دعا

 

147

حضرت ابراہیم ﷣کی دعا

 

148

حضرت یونس ﷣کی دعا

 

148

حضرت ایوب ﷣کی دعا

 

149

حضرت یعقوب ﷣کی دعا

 

149

حضرت زکریا ﷣کی دعا

 

150

(2) اٹھتے بیٹھتے اور سوتے جاگتے صرف ایک اللہ کا ذکر کیا جائے

 

150

(3) ایک اللہ ہی سے پنا ہ طلب کی جائے

 

151

(4) صرف ایک اللہ کی قسم کھائی جائے

 

151

(5)توبہ و انابت

 

152

(6) تو کل و اعتماد

 

152

عبادت کی دوسری صورت : جسمانی عبادتیں

 

152

دل سےمتعلقہ عبادتیں

 

152

(1) ایمان و یقین

 

153

(2) محبت و خشیت

 

153

(3) رجا و رغبت

 

153

جسم و بدن سے متعلقہ عبادتیں

 

154

نماز اور قیام صرف اللہ کے لیے

 

154

رکوع و سجود صرف اللہ کے لیے

 

155

قبروں پر سجدہ ریزی کی حرمت

 

157

طواف و اعتکاف بھی صرف اللہ کے لیے

 

158

حج اور روزہ بھی صرف اللہ کے لیے

 

159

عبادت کی تیسری صورت : مالی عبادتیں

 

159

نذر و نیاز صرف اللہ کے لیے

 

159

ہر طرح کی قربانی صرف اللہ کے لیے  ہونی چاہیے

 

161

تیسر ی فصل : تیسرا تعلق ، محتاج او رغنی کا

 

163

تمام نعمتیں اللہ تعالی کی عطا کردہ ہیں

 

164

سب سے بڑی نعمت ایمان و اسلام کی نعمت ہے

 

168

انعامات کے ساتھ آزمائش بھی لازم ہے

 

169

مصائب و مشکلات کیوں آتی ہیں ؟

 

170

مصائب و مشکلات سے نجات کی راہیں

 

172

(1) برے اعمال سے توبہ کرنا

 

172

برائی , بدی او رگناہ

 

172

توبہ و استغفار

 

172

عیسائیوں کا تصور توبہ و استغفار

 

174

(2) اللہ کے  حضور دعائیں او رالتجائیں

 

174

واسطے وسیلے کی حقیقت

 

176

وسیلے کی جائز شکلیں

 

177

(1) اللہ تعالی کے اسماو صفات کا وسیلہ

 

177

(2) اعمال صالحہ کا وسیلہ

 

178

(3) نیک زندہ شخص سے دعا کروانا

 

180

(3) اللہ کی راہ میں صدقہ و خیرات

 

181

(4) مظلوم اور پریشان حال سے تعاون

 

183

(5) صبرو استقامت او رنماز

 

183

آپ کے براؤزر میں پی ڈی ایف کا کوئی پلگن مجود نہیں. اس کے بجاے آپ یہاں کلک کر کے پی ڈی ایف ڈونلوڈ کر سکتے ہیں.

اس مصنف کی دیگر تصانیف

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 2448
  • اس ہفتے کے قارئین 9917
  • اس ماہ کے قارئین 26924
  • کل قارئین55231736

موضوعاتی فہرست