#4383

مصنف : ڈاکٹر صبحی صالح

مشاہدات : 4121

علوم القرآن ( صبحی صالح )

  • صفحات: 499
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 12475 (PKR)
(جمعہ 08 اپریل 2016ء) ناشر : ملک سنز کارخانہ بازار فیصل آباد

علوم القرآن سے مراد وہ تمام علوم وفنون ہیں جو قرآن فہمی میں مدد دیتے ہیں او رجن کے ذریعے قرآن کو سمجھنا آسان ہوجاتا ہے ۔ ان علوم میں وحی کی کیفیت ،نزولِ قرآن کی ابتدا اور تکمیل ، جمع قرآن،تاریخ تدوین قرآن، شانِ نزول ،مکی ومدنی سورتوں کی پہچان ،ناسخ ومنسوخ ، علم قراءات ،محکم ومتشابہ آیات وغیرہ ،آعجاز القرآن ، علم تفسیر ،اور اصول تفسیر سب شامل ہیں ۔علومِ القرآن کے مباحث کی ابتدا عہد نبوی اور دورِ صحابہ کرام سے ہو چکی تھی تاہم دوسرے اسلامی علوم کی طرح اس موضوع پربھی مدون کتب لکھنے کا رواج بہت بعد میں ہوا۔ قرآن کریم کو سمجھنے اور سمجھانے کے بنیادی اصول اور ضابطے یہی ہیں کہ قرآن کریم کو قرآنی اور نبوی علوم سےہی سمجھا جائے۔ زیر تبصرہ کتاب’’ علوم القرآن ‘‘لبنان کے ڈاکٹر صبحی صالح کی تصنیف ہے ۔اس کتاب میں ڈاکٹر صبحی صالح نے حقیقت وحی ، تاریخ قرآن، علوم القرآن، اعجاز القرآن وتاریخ تفسیر جیسے عنوانات کو موضوع بحث بنایا ہے ۔ان مذکورہ ابواب کے تحت کے سیکڑوں ذیلی عنوانات پھیلتے گئے ہیں ۔فاضل مصنف نے ان مباحث میں ان کا حق اداکردیا ہے ۔یہ کتاب اپنے موضوع پر نہایت مفصل اور تقریباً اس ضمن میں تحریر کردہ ایک صد کتب کی جامع ہے جن کاتذکرہ ماخذ کے طور پر مصنف نے کتاب کے آخر میں کیا ہے۔ معروف مترجم جناب پروفیسر غلام احمد حریری ﷫ نے 1966ء میں اس اہم کتاب کا ترجمہ کرنے کی سعادت حاصل کی ۔مترجم نے ترجمہ وتفہیم میں مطالب کا خاص کاخیال رکھا ہے اور مبہم ومجمل مباحث کوآسان بنا دیا ہے ۔کتاب کی افادیت ومقبولیت کے باعث اس کتاب کے متعدد ایڈیشن شائع ہوچکے ہیں ایڈیشن ہذا اس کتاب کا چوتھا ایڈیشن ہے۔اللہ تعالیٰ مصنف، مترجم اور نارشرین کی اس کاوش کو قبول فرمائے ۔ (م۔ا)

عناوین

صفحہ نمبر

حرف آغاز ازمترجم

5

پیش لفظ منصف طبع جدید

9

مقدمہ

15

باب اول

 

قرآن ووحی

22

فصل اول

 

اسمائے قرآن اور ان کامادہ اشتقاق

23

فصل ودم

 

وحی کامفہوم

31

بشریت رسول ؐ

43

انبیاء بر عتاب خداوند کانزول

45

حدیث قدوسی

50

فصل سوم

 

قرآن کاتدریجی نزول اور اس کےاثرات

72

شراب کی تدریجی تحریم

87

رہبانیت کاعدم جواز

91

باب دوم

 

تاریخ قرآن

93

فصل اول

 

قرآ ن جمع وتدوین

95

عہد رسالت میں کتابت قرآن

100

ترتیب سورۃ  وآیات

101

ترتیب سورتوقیفی ہے

103

تدوین قرآن او رحضرت ابوبکر صدیق ؓ

108

عہد عثمان ؓ میں تدوین قرآن

114

فصل دوم

 

عثمانی مصاحف تجوید وتحسین کے دو رمیں

130

طباعت قرآن کےمختلف ادوار

142

فصل سوم

 

حروف سبعہ

144

باب سوم

 

علوم القرآن

168

فصل اول

 

علوم اقرآن کاتاریخی جائز ہ

169

علوم القرآن پر اہم تصانیف

171

فصل دوم

 

علم اساب النزول

180

اسباب نزول کے ضمن میں روایات صحییحہ کی اہمیت

192

متقدمین کی تصانیف بر نقد وجرح

193

کتب قدیمہ میں اغلاط کی بھر مار

195

اسباب نزول سے متعلق صیغے 

202

ترجیح روایات صحیحہ

207

آیات کاربطہ وتعلق

2112

قرآن کافنی نظم ونسق

223

فصل سوم

 

مکی اور مدنی سورتیں

233

مستشرقین کے شکوک وشبہات

234

مکی ومدنی کی تقسیم زبانی کی افضلیت

239

نزول قرآن  کے چھ مراحل

240

پچیس علوم جو مفسر کے لیے ناگزیرہیں

241

غزوات میں نزول قرآن

246

ولیم اور ترتیب قرآن

251

بلاشیر کاترجمعہ قرآن

252

نزول قرآن کاآغاز انجام

255

مکی ومدنی کی پہچان کے دوطریقے

257

مکی سورتوں کی خصوصیات

258

مدنی سورتوں کی خصوصیات

260

مکی ومدنی سورتوں کے تین مراحل

263

ابتدائی سورتوں میں مندرج مضامین

264

متوسط مرحلہ کی سات مکی سورتوں کاتجزیہ

276

مرحلہ ثانیہ کی سورتوں پر مجموعی تبصرہ

291

ذوالقرنین

317

فصل چہارم

 

سورتوں کےآغاز کاسرسری جائز ہ

323

ابن عربی کازاویہ نگاہ

339

مستشرق نولدیکی کی ہرزہ سرائی

343

مستشرق بلاشیر کی رائے

344

فصل پنجم

 

علم قراءات وقراء کاجمالی تذکرہ

350

نقدقرات کامعیار ومدار

362

فصل ششم

 

علم ناسخ ومنسوخ

366

نسخ کی تعریف میں علماء کااختلاف

367

نسخ کی صحیح ترین اصطلاحی تعریف

369

ابو مسلم  اصفہانی کانقطہ نگاہ

371

نسخ وتخسیس کے مابین فرق وامتیاز

372

قائلین نسخ کی مبالغہ آمیزی

373

منکرین نسخ کی عجلت پسندی

387

اثبات  نسخ

388

سیوطی کےنزدیک آیات منسوخہ کی تعداد

390

آیات منسوخہ دس سے زائد نہیں

391

فصل ہفتم

 

قرآنی رسم الخط

392

فصل ہشتم

 

محکمات ومتشابہات

400

متشابہات کی تین اقسام

403

با ب چہارم

 

تفسیر واعجاز

411

فصل اول

 

علم تفسیر

413

اتباع تابعین اور علم تفسیر

415

کتب تفاسیر کی خصوصیات

419

مختلف فرقوں کی تفاسیر

421

صوفیا کی تفاسیر

422

باطنیوں کی تفاسیر

424

موجودہ تفاسیر

425

فصل دوم

 

قرآن اپنی تفسیر آپ ہے

427

قرآن میں عام وخاص

435

فصل سوم

 

اعجاز القرآن

448

متاخرین کی خدمات جلیلہ

452

سید قطب شہید کازاویہ نگاہ

454

قرآن میں تشبیہ واستعار ہ کااستعمال

458

مجاز کنایہ

460

فصل چہارم

 

قرآن حکیم کاصوتی اعجاز

466

خاتمہ الکتاب

466

قرآن کریم کی حقیتقت واصلیت تمت

468

علم ناسخ ومنسوخ

469

نقد قرات کامعیار ومدارد

470

مستشرق بلاشیر کی رائے

471

قرآن کریم کی حقیقت

472

سیدقطب شہید کازاویہ نگاہ

473

آپ کے براؤزر میں پی ڈی ایف کا کوئی پلگن مجود نہیں. اس کے بجاے آپ یہاں کلک کر کے پی ڈی ایف ڈونلوڈ کر سکتے ہیں.

اس مصنف کی دیگر تصانیف

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 1236
  • اس ہفتے کے قارئین 10921
  • اس ماہ کے قارئین 49315
  • کل قارئین49382720

موضوعاتی فہرست