#1237.57

مصنف : ڈاکٹر محمد بہاؤ الدین

مشاہدات : 247

تحریک ختم نبوت جلد 58

  • صفحات: 314
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 9420 (PKR)
(بدھ 05 اگست 2020ء) ناشر : مکتبہ اسلامیہ، لاہور

پروفیسر ڈاکٹرمحمد سلیمان بہاؤ الدین فاتح قادیان شیخ الاسلام مولانا ابو الوفا امرتسری ﷫ کے مرزائیت کے رد ّمیں تیار کردہ معروف  مبلغ کہ جن کی ساری زندگی قادیانیت کے تعاقب اور مسلکِ حق اہل حدیث کے فروغ و اشاعت میں بسر ہوئی۔ بابائے تبلیغ، مولانا محمد عبداللہ گورداسپوری رحمہ اللہ کے صاحبزادہ ہیں ۔موصوف  دینی و دنیوی تعلیم سے آراستہ ہیں لکھنے پڑھنے کا ذوق اچھا ہے۔ستر اور اسی کی دہائی میں  پاک وہند کےمعروف  علمی مجلات میں انکے کئی علمی وتحقیقی مضامین شائع ہوئے ۔مجلہ محدث،لاہور میں بھی درجن سے زائد  مضامین شائع ہوئے ۔ڈاکٹر  بہاؤ الدین صاحب  شہید ملت علامہ احسان الہی ظہیر  کےجاری کردہ رسالہ ’ترجمان الحدیث ‘ کی مجلس ادارت میں بھی شامل رہے ۔ 1970ء کے عشرے میں جامعہ سلفیہ میں انگریزی کے اُستاد رہےاور  جامعہ اِسلامیہ بہاولپور اور بعض دوسرے سرکاری کالجز میں پروفیسر رہے۔ 1987ء سے برطانیہ میں مقیم ہیں۔ ’تحریک ختم نبوت‘ اور ’تاریخ اہل حدیث‘ ان کی شاہکار تصانیف ہیں جو پاک و ہند سے شائع ہو کر اہل علم سے دادِ تحسین حاصل کر چکی ہیں۔ ڈاکٹر صاحب کے تفصیلی حالات ان کی تصنیف ’ تحریک ختم نبوت‘ کی جلد نمبر 9کے شروع  میں ملاحظہ کیے جاسکتے ہیں۔ زیر نظر کتاب’’تحریک ختم نبوت ‘‘ ڈاکٹر بہاؤالدین  حفظہ اللہ  کی وہ  شاہکار تصنیف ہے  جوختم نبوت کےسلسلے میں  علمائے اہل حدیث کی  تحقیقی وتصنیفی خدمات پرمشتمل  انسائیکلوپیڈیا ہے۔ ڈاکٹر صاحب نے اس کتاب میں 1891ء سے تقسیم ہند تک  ردّ قادیانیت کے سلسلے میں  اہل حدیث اہل  علم کی تحقیقی وتصنیفی کاوشوں  کو تن تنہاء ذوق و شوق اوربڑی محنت و ہمت سے 74؍جلدوں میں مرتب کرکے عظیم  الشان تاریخی  کارنامہ انجام دیا ہے۔ جو تاریخ میں سنہری حروف سے لکھا جائے گا۔ دیار غیر میں  رہتے ہوئے پروفیسر محمد سلیمان اظہر (ڈاکٹر بہاء الدین) کو اللہ تعالیٰ نے یہ سعادت بخشی ہے کہ انہوں نے ختم نبوتﷺ  اور ردِّ قادیانیت کے حوالے سے ایک بے مثال ’’انسائیکلوپیڈیا‘‘ مرتب کرکے ثابت کیا ہے کہ وہ نمونہ سلف کے امین ہیں۔ اس انسائیکلو پیڈیا میں برصغیر کے مختلف مکاتب فکر کے اکابرین کی خدمات کا تزکرہ ہے جنہوں نے مرزا غلام احمد قادیانی کی زندگی  اور موت کے بعد بھی اس کی جھوٹی نبوت کا ردّکیا اور پھر تحریک ختم نبوتﷺ اور ردقادیانیت میں تقریری اور تحریری خدمات پیش کیں ۔74 میں سے 60 جلدیں  تو باقاعدہ  مختلف مکتبات سے پرنٹ ہوچکی ہیں باقی جلدیں ابھی طباعت کے انتظار  میں  ہیں۔تحریک ختم نبوت کی ابتدائی  جلدیں  اولاً  انڈیا سے شائع ہوئی بعد ازاں مکتبہ قدوسیہ ،لاہور نے  اس کی پہلی 17 ؍جلدیں شائع  کیں۔جلد17 کےبعد60تک تمام جلدیں مکتبہ اسلامیہ ،لاہور سے شائع ہوئیں۔یادر ہے  اس قدر  وسیع اور عظیم کام  ایک ادارے ،جماعت  یاتنظیم کام ہے جوکہ ڈاکٹر بہاؤالدین صاحب نے اپنے صاحبزادے سہیل اظہر صاحب کی معاونت سے خود ہی انجام دیا ہے۔جس  میں مواد کا حصول وتلاش  ،ایڈیٹنگ وترتیب   کے امور شامل ہیں ۔حصول مواد اور اشاعت وطباعت    پر اٹھنے والے سارے  مالی اخراجات  کاانتظام بھی خود صاحب تصنیف نے  کیا ہے۔اللہ تعالیٰ   ڈاکٹر   کی اس  عظیم کاوش کو قبول  فرما کر ان کے میزانِ  حسنات میں اضافے کا باعث بنائے اور انہیں  ایمان وسلامتی  والی زندگی سےنوازے ۔(آمین)تحریک ختم نبوت کی جلدیں جیسے  جیسے تیار ہوتی رہیں  کتاب وسنت سائٹ پر پبلش ہوتی رہیں اب  تک  اس کی 53جلدیں کتاب وسنت سائٹ  پبلش ہوچکی ہیں  افادۂ عام کےلیے اب اس  کی اس کی مزید جلدوں کو بھی  پبلش کیا  جارہا ہے ۔تحریک ختم نبوت کی تمام جلدیں ڈاکٹر بہاؤ الدین کی اپنی سائٹ(https://drsuleman.com/) پربھی موجود ہیں   ۔(م۔ا)

عناوین

صفحہ نمبر

فاتحۃ الکتاب

9

حجۃالجبار

11

اصغر علی روحی اوران کا قصیدہ

22

پیسہ اخبار لاہور سے چند مضامین

54

جناب مرزا غلام احمد صاحب

54

جناب مرزا غلام احمد صاحب قادیانی لاہور میں

55

پنڈت لیکھ رام اور مرزا قادیانی کی تصانیف

56

پیشین گوئی جناب مرزا صاحب قادیانی

58

پادری آتھم کے متعلق قادیانی پیش گوئی

59

منکوحہ آسمانی کے شوہر کے متعلق قادنی پیش گوئی

60

سلطان محمد اورمرزا غلام احمد کی پیش گوئی

61

آئندہ رمضان کے کسوف وخسوف

62

پنجاب میں طاعون اور میرزاصاحب کا اعلان

66

اس تحریر سے گورنمنٹ کو یا پبلک کودھوکہ دینا منظور ہے

72

چوں خداخواہد کہ پردہ کس درد

77

غایۃ المقصود

78

پیر صاحب گولڑوی ومرزائے قادیانی

79

سید مہرعلی شاہ گولڑوی۔غلام احمد قادیانی

79

مرزا غلام احمد قادیانی کی زلزلہ کی پیش گوئی

80

مرزا صاحب قادیانی اور مسلمانوں کے معتقدات

83

ہفتہ وارگپ شپ

85

مرزا صاحب قادیانی اوران کےدعاوی

83

اخبار اہل حدیث امرتسرسے

91

نسل بدکاراں یعنی ذریۃ البغایا

91

مودت نامہ بخدمت مولوی محمد علی لاہوری

94

گاندھی جی اور مرزاقادیانی

95

مسلم لیگ پر قادیانی اثر سوء

97

مودت نامہ کا جواب

99

ابطال دعوی مجددیت مرزا صاحب

101

مرزائی علم کلام کا نمونہ

103

مرزائیوں کےلئے انعام حاصل کرنے ایک نادرموقعہ

107

جلسہ انجمن اہل حدیث بٹالہ میں قادیانی مباحثہ

108

قادیانی جماعت کو ایک فیصلہ کن چیلنج

111

قادیانی انعام

113

مرزا صاحب کے دوخواص

114

مرزاصاحب کا پروگرام

117

مودت نامہ جواب

121

مہرالدین بنام محمد علی لاہوری

124

مکتوب مفتوح بنام عبدالرحمن (مہرسنگھ)قادیان

126

تینوں میں سچا کون؟مرزائی آریہ یا عیسائی؟

127

جواب ٹریکٹ بخدمت مولوی محمد علی

130

وزیر آباد پنجاب میں مناظرہ قادیانی

136

مولوی محمد علی لاہوری کی تحریف قرآنی

140

مرزائیوں سے مناظرہ اوران کی شکست

142

مرزا محمودبطورمصنف

143

شریف اور محمود کی اشتہار بازی میں ہمارا محاکمہ

144

قادیان کا انعام:عنقاصفت

147

انعامی چیلنج کی حقیقت

150

حقیقت دجال اوریاجوج ماجوج

153

دلیر کون ہے؟عیسائی یامرزائی

157

تاریخ مرزااور فاروق قادیانی

161

مرزاصاحب کی ترقی مدارج

167

کتاب فیصلہ مرزا کی طلبی دمشق سے

170

انعامی فیصلہ

171

قلعہ نبوت مرزا پرگولہ باری

172

مرزائی دوستو!خداسے ڈرو

173

پیدائش مرزا،اورتاریخ مرزا

174

قادیانی تصویر کا اصلی رخ

178

حضرت مسیح موعود عیسی بن مریم کا حج کرنا

180

مرزا صاحب قادیانی کا مبلغ علم

197

محبت نامہ بخدمت مولوی محمد علی لاہوری

199

قادیان کا سہ صد انعام

201

قادیانی اور لاہوری مرشد بھائیوں سے خطاب

202

امت مرزا میں اکی جدید نبی

206

ایک نبی کی پیش گوئی متعلق گورداسپور میں فساد

211

مولانا سیالکوٹی اورمرزا قادیانی

212

نمونہ اجتہاد مرزا صاحب

213

قادیانی علماء سے ایک سوال

215

قصیدہ یائیہ

216

مرزاصاحب کا تصرف فی القرآن

227

جدید رسول کی دعوت

230

قادیانی تبلیغ:قابل توجہ جماعت اہلحدیث

233

مباحثہ مونگ کا چیلنج

234

مرزا قادیانی ،میاں صاحب دہلوی ،مولوی ثناءاللہ

235

درخواست بخدمت میاں محموداور مولوی محمد علی

239

قادیانی رجعت قہقری

240

توہین انبیاء کس نے کی

241

بنارس میں تبلیغ قادیانیت

244

صداء ایمان بجواب ندائے ایمان

251

آریہ سماج اورجماعت احمدیہ کی کامیابی

254

قرآں وحدیث اور پنجابی نبی

256

قادیان کے ایک سوال کا جواب اورہمارا سوال

259

مرزا صاحب کے قرآنی معارف

260

امت مرزائیہ جدید نبی کے سامنے کیوں خاموش ہے

265

تصانیف ثنائیہ پر ایک جلیل القدر شہادت

267

بقول مرزا داخلہ بہشت کے اسباب

268

آل انڈیا کشمیر کمیٹی کا جلسہ امر تسر میں

271

امر تسر میں مرزائیوں کا سیرتی جلسہ

272

انبیاء احمدیہ علیہم الآلام

273

مولوی ثناءاللہ صاحب کو آریوں کا چیلنج

275

امر تسری جلسہ مرزائیہ میں مارپیٹ

277

جلسہ جمعیۃ اہل حدیث کلکتہ پر تبصرہ

279

قادیان تبلیغ

283

شہادات مرزا

286

پہلے مجھے دیکھئے

286

دعوی مرزا صاحب

287

باب اول:متعلق احادیث

288

پہلی شہادت

288

دوسری شہادت

289

تیسری شہادت

290

تتمہ باب اول

292

دوسرا باب :قادیانی الہامات سےاس کے برخلاف شہادات

294

دوسرا الہام:پانچویں شہادت

296

تیسرا الہام:چھٹی شہادت

297

ساتویں شہادت:اقول مرزائیہ سے

299

آٹھویں شہادت:مرزا صاحب کا اقبالی بیان

301

نویں شہادت:حرمین شریفین کے درمیان ریل

307

دسویں شہادت:قطعی فیصلہ

309

اس مصنف کی دیگر تصانیف

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 743
  • اس ہفتے کے قارئین 11708
  • اس ماہ کے قارئین 743
  • کل قارئین56446910

موضوعاتی فہرست