#2977

مصنف : ڈاکٹر محمد ادریس زبیر

مشاہدات : 4764

علم حدیث مصطلحات اور اصول

  • صفحات: 270
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 6750 (PKR)
(جمعہ 13 مارچ 2015ء) ناشر : الہدیٰ پبلیکیشنزِ اسلام آباد

علم حدیث سے مراد ایسے  معلوم قاعدوں اور ضابطوں  کا  علم ہے  جن کے  ذریعے سے کسی  بھی حدیث کے راوی یا متن کے حالات کی اتنی معرفت حاصل ہوجائے    کہ آیا راوی یا اس کی حدیث  قبول کی جاسکتی ہے یا نہیں۔اور علم  اصولِ حدیث ایک ضروری علم  ہے ۔جس کے بغیر حدیث  کی معرفت ممکن نہیں احادیث نبویہ کا مبارک علم پڑہنے پڑھانے میں بہت سی اصطلاحات  استعمال ہوتی ہیں جن سے طالب علم کواگاہ ہونا از حدضرورری ہے  تاکہ  وہ اس  علم   میں کما حقہ درک حاصل   کر سکے ، ورنہ  اس کے فہم  وتفہیم  میں  بہت سے الجھنیں پید اہوتی ہیں اس موضوع پر ائمہ فن وعلماء حدیث نے مختصر   ومطول بہت سے کتابیں تصنیف فرمائی ہیں۔ زیر نظر کتاب ’’علم حدیث  مصطلحات اور اصول‘‘ محترم جناب ڈاکٹر محمد اریس زبیر صاحب کی  کاوش ہے ۔جسے انہو ں نے   اصول حدیث  کی   اہم عربی  کتب سے استفادہ کر کے  جملہ  اصطلاحات حدیث کو    حوالہ اور مثالوں کے ساتھ   اردو دان طبقے  اور حدیث کے طلبہ وطالبات کے لیے  آسان فہم انداز میں بیان کیا  ہے  ۔ یہ   کتاب  اصول حدیث کی  معرفت کےلیے   اردو  میں  لکھی  جانے والی کتب میں اہم اضافہ  ہے ۔مدارس  ویونیورسٹیوں میں  زیر تعلیم  طالبان ِ حدیث کےلیے   بیش قیمت علمی  تحفہ ہے ۔کتاب ہذا کے مصنف  فہم  قرآن  اور خواتین  کی دینی  تعلیم تربیت کے لیے کوشاں معروف ادارے  ’’ دار الہدیٰ‘‘ کی سربراہ  ڈاکٹر فرہت ہاشمی  صاحبہ کے  شوہر ہیں۔موصوف کا ملتان کے ایک علمی خانوادے  سے تعلق ہے  درس ِنظامی کے بعد پنجاب یونیورسٹی سے ایم عربی کی   ڈگری حاصل کی۔ 1983ءانٹرنیشنل یونیورسٹی اسلام آباد  کے کلیۃ الدین سے منسلک ہوگئے  ۔1989ء میں  گلاسگو یونیورسٹی سے علم حدیث میں   ڈاکٹریٹ  کیا  عربی،  اردو، انگریزی زبان میں بہت سے آرٹیکلز لکھنے کے علاوہ چند کتب کے مصنف بھی  ہیں اللہ تعالیٰ ان کےعلم وعمل میں برکت فرمائے۔  (آمین)(م۔ا)
 

عناوین

 

صفحہ نمبر

تعارف  

 

7

چند اہم اصطلاحات

 

10

محدثین کے القاب

 

13

1۔علم حدیث اور مختصر تاریخ

 

16

تاریخ و تدوین زمانہ قبل و بعد

 

17

تدوینی مراحل : غیر مدون

 

20

مدون صورت

 

26

مقدمیہ ابن الصلاح میں علماء کی دلچسپی

 

31

علم حدیث کی انواع

 

33

علم مصطلح کیوں ؟

 

38

علم ، ظن اور یقین

 

41

2۔ علم حدیث کا موضوع

 

48

مصطلحات حدیثیہ

 

64

اقسام حدیث

 

69

3۔ تعداد اسانید کے اعتبار سے خبر کی اقسام

 

71

خبر متواتر اور اس کی اقسام :لفظی ومعنوی ۔ اسباب تواتر لفظی ۔ اس کا وجود ۔حکم

 

 

خبر واحد ؍ آحاد : غریب ۔مستفیض ۔ مشہور

 

 

نسبت کےاعتبار سے خبر واحد کی اقسام

 

82

مرفوع اور اصول ، موقوف اور اصول ، مقطوع اور اصول

 

 

4۔رد و قبول کےاعتبار سےخبر واحد کی اقسام

 

89

مقبول ومردود

 

 

مقبول حدیث کی پانچ اہم شروط

 

90

متصل ۔عادل ۔ ضابطہ ۔عدم علت ۔ عدم شذوذ

 

 

مقبول حدیث کی اقسام : احادیث :صحیح ۔ حسن ۔ محفوظ ۔معروف

 

98

حدیث صحیح اور اس کی اقسام

 

98

صحیح لذاتہ : صحیح حدیث کےدرجات اور فوائد ۔بعض احادیث کےصحیح ہونے پر محدثین کا اختلاف ۔

 

 

صحیح لغیرہ

 

102

صحیح احادیث صحیحین کےعلاوہ

 

104

صحیحین پر استدراک اور استخراج

 

104

حدیث حسن اوراس کی اقسام

 

105

حسن لذاتہ

 

106

اصول وقواعد ۔ صحیح وحسن میں فرق اور حکم ۔ اصول و قواعد

 

 

حسن لغیرہ ۔ اصول و قواعد

 

109

محفوظ ومعروف

 

111

ر۔ ثقہ کی طرف سے کچھ اضافہ

 

111

طبقات کتب حدیث

 

112

طبقات محدثین

 

113

اعتبار ،متابعت اور شاہد

 

114

5۔رد و قبول کےاعتبار سےخبر واحد کی دوسری قسم

 

121

مردود احادیث

 

 

حدیث ضعیف : راوی سے طعن کی وجہ سے ۔ سند میں راوی کےسقوط کی وجہ سے

 

 

عدالت میں طعن کے متعدد اسباب

 

122

جھوٹ : موضوع ۔ وضاع لوگ : زنانہ دقہ ۔ قصاص ۔ زاہد و عابد ۔ مذہبی متعصب جھوٹ کی تہمت : متروک و مطروح

 

 

فسق

 

 

جہالت : مجہول العین و مجہول الحال ۔ مبہم ۔ بدعت : بدعت کبری و صغری ، سنی وبدعتی ، مبتدع اورمحدثین کرام ۔ مبتدع تائب ہوجائے تو کیا اس کی روایت قبول کی جائے ؟ روافض سے روایت کا حکم کیا ہے ؟

 

 

ضبط میں طعن کے متعدد اسباب

 

134

فحش غلطیاں ۔غافل ۔ وہمی

 

 

مخالفت : مدرج ۔ مقلوب ۔ متصل سند میں اضافہ ۔ مضطرب ۔ محرف ۔ مصحف ۔شاذ مختلط ۔ منکر ۔ معلل

 

 

حدیث ضعیف : سند میں راوی کے سقوط کی وجہ سے

 

161

سقط جلی کی وجہ سے انقطاع ، منقطع ۔ معضل ۔ مرسل : متصل اور مرسل میں تعارض اور اصول ۔مرسل صحابی ۔ معلق ۔ سقط خفی کی وجہ سے انقطاع : مدلس ۔ مرسل خفی ۔ معنعن و مؤنن

 

 

ضعیف حدیث پر عمل

 

193

غیر محدثانہ اصول اور مہلک نتائج

 

197

تصحیح وتضعیف حدیث میں اختلاف اور وجوہات

 

207

6۔روایت کی خصوصیات کی بناء پر احادیث کی تقسیم

 

209

روایت اقران ۔ مدبج ۔ روایۃ الاکابر عن الاصاغر ۔ روایت الآباء عن الابناء ۔ روایت الانباء عن الآباء ۔

 

 

راوی حدیث کی خصوصیات کے لحاظ سے حدیث کی تقسیم

 

210

سابقہ ولاحق ۔ معرفۃ الاخوۃ الاخوات ۔ معرفۃ المہمل ۔ مسلسل ۔ متفق و مفترق ۔ مؤتلف ومختلف ۔ متشابہ ۔ القاب ۔

 

 

7۔تحمل حدیث اور اداء حدیث

 

218

سماع ۔ قراءۃ ۔ اجازہ ۔ مناولہ ۔ کتابہ ۔ اعلام الشیخ ۔ وصیۃ ۔ وجادۃ ۔ رموز حدیث ۔ متعدد اسانید کےرموز ۔ محذوفہ کلمات ۔ اختصار حدیث

 

 

8۔حدیث کی علوم کی انواع

 

232

علم مختلف الحدیث ۔ علم ناسخ و منسوخ ۔ علم علل حدیث ۔ علم غریب الحدیث ، علم الرجال وغیرہ

 

 

9۔علم جرح وتعدیل : وجوہ و اسباب

 

248

جرح یا غیبت ۔ مراتب ۔ شروط ۔ قاعدے

 

 

10۔ صحیح و ضعیف حدیث معلوم کرنے کاآسان طریقہ

 

262

مصادر

 

264

 

آپ کے براؤزر میں پی ڈی ایف کا کوئی پلگن مجود نہیں. اس کے بجاے آپ یہاں کلک کر کے پی ڈی ایف ڈونلوڈ کر سکتے ہیں.

اس مصنف کی دیگر تصانیف

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 1959
  • اس ہفتے کے قارئین 6072
  • اس ماہ کے قارئین 36136
  • کل قارئین50023846

موضوعاتی فہرست