#2674.01

مصنف : محمد نافع

مشاہدات : 4992

فوائد نافعہ جلد دوم

  • صفحات: 305
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 7625 (PKR)
(پیر 20 جولائی 2015ء) ناشر : دار الکتاب لاہور

صحابہ کرام  اس امت کے سب سے افضل واعلی لوگ تھے ،انہوں نے نبی کریم  ﷺ کو اپنی آنکھوں سے دیکھا،ان کے ساتھ مل کر کفار سے لڑائیاں کیں ، اسلام کی سر بلندی اور اللہ اور اس کے رسول کی خوشنودی کے لئے اپنا تن من دھن سب کچھ قربان کر دیا۔پوری امت کا اس بات پر اتفاق ہے کہ  صحابہ کرام  تمام کے تمام  عدول ہیں یعنی دیانتدار،عدل اور انصاف کرنے والے ،حق پر ڈٹ جانے والے اور خواہشات کی طرف مائل نہ ہونے والے ہیں۔صحابہ کرام  کے بارے  میں اللہ تعالی کا یہ اعلان ہے کہ اللہ  ان سے راضی ہے اور وہ اللہ سے راضی ہیں۔نبی کریم ﷺ کے ان صحابہ  کرام   میں سے بعض صحابہ کرام   ایسے بھی ہیں جن کی جرات وپامردی،عزم واستقلال اوراستقامت نے میدان جہاد  میں جان اپنی ہتھیلی پر رکھ کر بہادری  کی لازوال داستانیں رقم کیں،اور اپنے خون کی سرخی سے اسلام کے پودے کو تناور درخت بنایا،لیکن اس کے باوجود بعض دشمنان صحابہ کی طرف سے مختلف صحابہ کرام    پر طرح طرح کے اعتراضات کئے جاتے ہیں اور ان کی مقام ومرتبہ کو کم کرنے کی ناکام کوشش کی جاتی ہے۔ زیر تبصرہ کتاب "فوائد نافعہ" دو جلدوں پر مشتمل ہے جومحترم  مولانا محمد نافع صاحب جھنگوی کی تصنیف ہے۔جس میں انہوں نےمختلف صحابہ کرام   پر وارد ہونے والے متعدد اعتراضات  کا تسلی بخش جواب دیا ہے۔ اللہ تعالی مولف کی اس مخلصانہ کوشش کو  قبول فرمائے اور تمام مسلمانوں کو صحابہ کرام  سے محبت کرنے کی توفیق عطافرمائے۔آمین(راسخ)

عناوین

 

صفحہ نمبر

مقدمہ

 

 

سانحہ کربلا سےحضرت حسین ؓ امت سے نہیں کٹے

 

15

مدینہ منورہ میں حضرت علی بن الحسین کی ملی جلی علمی شخصیت

 

15

حضرت حسن کی زندگی کےمختلف ادوار

 

16

سوانح حضرات حسنین شریفین ؓ

 

20

مضامین کااجمالی خاکہ ( بمع عرضداشت )

 

22

الفصل الاول ( عہد نبوی)

 

22

نام ونسب

 

22

ولادت

 

23

اذان کہنا

 

24

وضاحت ( برائے اذان و اقامت )

 

24

تحنیک ( گھٹی ڈالنا )

 

25

حسن و حسین اور محسن نام رکھنا

 

27

حلق راس

 

27

عقیقہ

 

28

حسنین ؓ کے لیے تعوذ فرمانا

 

29

چاندی کے زیور کو ناپسند فرمانا

 

30

طلب شے میں تقدیم و تاخیر کالحاظ

 

30

آل نبوی پر صدقہ کاعدم جواز

 

31

دعائے قنون اوردیگر کلمات کی تعلیم

 

33

رفع اشتباہ

 

34

بیعت تبرک

 

42

حضرت حسن ؓ کےحق میں اہم پیش گوئی

 

43

حسنین شریفین ؓ کا معلم

 

43

اپنی سواری پر سوار کرنا

 

43

فضائل ومحامد

 

44

نماز کی حالت میں مشفقانہ سلوک

 

46

دوش مبارک پر اٹھانا

 

46

حسنین ؓ سے محبت کی ترغیب

 

47

حسنین ؓ منیٰ و انامنہ

 

48

شفقت کا ایک واقعہ

 

48

شفقت کادیگر واقعہ

 

48

جسمانی مشابہت

 

50

اظہار محبت

 

51

اہل جنت کےجوانوں کے سردار

 

51

آیت تطہیر اور روایت کا مصداق

 

52

دعوت مباہلہ اور حسنین کی فضیلت

 

54

اہل بیت نبوی کے ساتھ حسن سلوک اور رعایت کا فرمان

 

55

الفصل الثانی ( عہد خلفاء ثلاثہ ؓ)

 

57

( عہد صدیقی )

 

59

قدر دانی

 

61

اظہار محبت ( مشابہت نبوی )

 

63

(عہد فاروقی )

 

64

پوشاک کاعطیہ (یمنی پوشاک )

 

65

مالی حقوق کی رعایت

 

66

کسریٰ کےخزائن کی تقسیم

 

68

خمس عراق سےوظائف

 

69

حضرت عمر ؓ کے خانہ میں آمد و رفت ( ام کلثوم کےہاں)

 

69

حضرات حسنین ؓ کے فرمان پر بلال ‎ؓ ؓ کی اذان

 

70

اسلامی جہاد میں شرکت اور کرامت کا ظہور

 

71

حضرت عمرؓ کی فکر آخرت اورامام حسنؓ کی گواہی

 

73

(عہد عثمانی 24ھ)

 

74

تمہید مسئلہ

 

75

عروہ بن الزبیرؓ کی شہادت

 

75

حسن البصری کی شہادت

 

77

معاشی خوشحالی

 

77

عہد عثمانی میں حسنین ؓ کی ملی خدمات

 

78

خصوصی عطیہ (دختران یزدجرد)

 

79

تنبیہہ

 

81

محاصرہ عثمانی میں جناب حسنین ؓ کی خدمات

 

83

حضرت حسن ؓ کا مجروح ہونا

 

84

جنازہ دفن عثمانؓ میں حضرت علی ؓ وحسن ؓ کی شمولیت

 

88

حاصل مرام

 

89

الفصل الثالث ( عہد خلافت علی المرتضیٰؓ)

 

90

تمہیدی کلمات ( شہادت عثمانؓ کےبعد مدینہ منورہ کے حالات )

 

92

حضرت حسن ؓ کا مشورہ ( بیعت میں تاخیر چاہیے)

 

93

عبداللہ بن سلام کا مشورہ ( مدینہ سےخروج نہ کریں )

 

94

سیدنا حسن ؓ کی رائے اور حضرت علیؓ کےجوابات )

 

94

جنگ جمل کےمتعلقات

 

97

مروان کےحق میں امان کی سفارش

 

98

ام المومنین حضرت عائشہ ؓ کی حجاز کی طرف روانگی کا اہتمام

 

99

قتال صفین پر مرتضوی اظہار تاسف

 

100

حضرت حسن ؓ کا فقراء میں مال تقسیم کرنا

 

101

عیادت کا اجر و ثواب

 

102

زہد وتقویٰ کی تلقین

 

102

استخلاف کے لیے مرتضویٰ ہدایات

 

103

وصایا

 

104

غسل کفن جنازہ اور دفن مرتضویٰؓ

 

104

حضرت حسنؓ کی جانب سے ایک زعم کا جواب ( رجعت علی المرتضیٰ)

 

105

بیعت خلافت سیدنا حسن ؓ

 

106

الفصل الرابع ( عہد خلافت سیدنا حسن ؓ)

 

110

مبارک بادی پر وقوع طلاق

 

111

تنبیہہ ( طلاق ثلاثہ کا حکم )

 

112

اہل عراق سےناراضگی کا اظہار

 

115

حضرت امیر معاویہ ؓ سےمصالحت

 

116

صلح کی پیش گوئی

 

117

شرائط صلح کی وضاحت

 

118

تاریخی مصالحت

 

119

مقاصد صلح ومصالحت

 

121

شبہ کا ازالہ

 

123

عراق یےمدنیہ النبی کی طرف مراجعت

 

124

معاشی احوال

 

126

عطیات و و ظائف

 

126

عبادت

 

127

تقویٰ کا عمل

 

128

قیام مکہ مکرمہ کےمعمولات

 

129

قیام اللیل

 

130

خلفاء کی اقتداء میں نمازیں ادا کرنا

 

131

عمل حج

 

133

ابن عباس کا رشک کرنا

 

134

مالی صدقہ

 

134

بعد الوفات صدقہ کا عمل

 

135

مروت و  سخاوت

 

136

حلم و بردباری

 

137

حق کی ادائیگی

 

139

فائدہ

 

140

دعوت کو قبول کرنا اور دعوت دینا

 

140

علمی فضیلت

 

141

فائدہ ( تفوق علمی ہے نسبی نہیں )

 

144

روایت حدیث نبوی ﷺ

 

145

تنبیہہ ( حسنین ؓ کی امہات المومنین سےعمدہ روابط )

 

146

علمی مسابقت

 

147

ایک اہم خطبہ

 

147

رضا بقضاء

 

148

غسل میت میں حضرت حسنؓ کی ہدایت

 

149

خضاب کرنا

 

150

انگشتری کا استعمال

 

150

فحش گوئی سےاجتناب

 

151

منازعت کے بعد مصالحت

 

152

اکابر کی طرف سے قدر شناسی

 

154

اس کتاب کی دیگر جلدیں

فیس بک تبصرے

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 22235
  • اس ہفتے کے قارئین 144090
  • اس ماہ کے قارئین 860970
  • کل قارئین101022808
  • کل کتب8701

موضوعاتی فہرست