#6724

مصنف : ڈاکٹر منیر احمد مغل

مشاہدات : 625

عرف اور سد ذرائع

  • صفحات: 53
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 2120 (PKR)
(پیر 06 جون 2022ء) ناشر : شریعہ اکیڈمی اسلام آباد

قانون اسلامی ، اختصاصی مطالعہ کورس ۔چوبیس درسی اکائیوں پر مشتمل اس کورس  کو  مختلف  سکالرز نے مرتب کیا  اور شریعہ اکیڈمی  بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی ،اسلام آباد نے تقریبا بیس سال قبل  اسے کتابی صورت میں شائع کیا ہے۔یہ کورس بنیادی طور پر علم اصول فقہ کے اختصاصی مطالعے کےلیے تیار کیا گیا ہے۔ جس کا مقصد علم اصول فقہ کے جملہ مباحث کو عام فہم انداز میں طلبہ کے ذہن نشین کرانا ہے۔ پانچوں مکاتبِ فقہ کےبنیادی اصولوں کا تقابلی مطالعہ بھی اس میں شامل ہے۔ اسی طرح مناہج اجتہاد، قواعد فقہیہ اور تقنین (فقہی احکام کی ضابطہ بندی) کے موضوعات بھی کورس کا حصہ ہیں۔ چوبیس درسی اکائیوں پر مشتمل اس کورس میں کوشش کی گئی ہیں کہ اصول فقہ کے مباحث کی ضروری تفصیلات مثالوں کے ساتھ پیش کر دی جائیں۔ رسرچ  سکالرز کے افادہ  اور نیٹ پر  محفوظ کرنے کی غرض سے اسے کتاب وسنت سائٹ پر  پبلش کیا گیا ہے۔اس کورس کے کل 24 اجزاء ہیں۔  جزءاول (علم اصول فقہ: ایک تعارف (حصہ اول ) اور  بیسواں جزء (فقہ حنفی وفقہ مالکی ) دستیاب نہیں ہوسکے ۔(م۔ا)

عناوین

صفحہ نمبر

پیش لفظ

5

تعارف

7

عرف

9

عرف کی تعریف

9

عرف کے ارکان

10

عرف کی شرعی حیثیت

11

عرف و عادت سے متعلق کلیات

14

عرف کی اساس

16

اعتبار عرف کی شرائط

18

عرف و عادت کی اقسام

20

عرف و عادت اور منصوص احکام

24

عرف اور نص عام میں تعارض

28

عرف اور اجتہادی احکام میں تعارض

28

معاملات میں عرف وعادت کا اعتبار

32

مجلس عقد اور عرف

33

استحسان اور عرف

34

عرف اور بین الاقوامی قانون

34

سد ذرائع

36

لغوی اور اصطلاحی تحقیق

36

اسلامی شریعت کے مقاصد

37

نتائج کے اعتبار سے افعال کی اقسام

38

سد ذرائع کے اعتبار کے دلائل و نظائر

40

ذرائع کی نوعیت میں تغیر

43

عصر حاضر  میں قاعدہ ذرائع

45

اہم نکات

45

کتب برائے مزیدمطالعہ

47

مصادر و مراجع

48

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 1688
  • اس ہفتے کے قارئین 17470
  • اس ماہ کے قارئین 38637
  • کل قارئین71542204

موضوعاتی فہرست