#6802

مصنف : ڈاکٹر فضل الٰہی

مشاہدات : 2829

اذکار مصائب

  • صفحات: 178
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 7120 (PKR)
(منگل 27 ستمبر 2022ء) ناشر : دار النور اسلام آباد

دنیا دارالامتحان ہے اس میں انسانوں کو آزمایا جاتا ہے ۔آزمائش سے کسی مومن کوبھی مفر نہیں۔ اسے اس جہاں میں طرح طرح کی مصائب اور پریشانیوں کاسامنا کرنا پڑتاہے۔ قسم قسم کےہموم وغموم اس پر حملہ آور ہوتے ہیں ۔اور یہ تمام مصائب وآلام بیماری اور تکالیف  سب کچھ  منجانب اللہ ہیں  اس پر ایمان ویقین رکھنا ایک مومن کے عقیدے کا  حصہ ہے۔  ایک مومن  شخص   کو  مصائب، مشکلات ، پریشانیوں اور غموں کا  علاج اور ان سےنجات دعاؤں کے ذریعے سے  کرنا چاہیے ۔ زیر نظر کتاب’’ اذکار مصائب‘محترم جناب ڈاکٹر فضل الٰہی ﷾ کی تصنیف ہے۔ڈاکٹر صاحب نے اس کتاب میں  حسب ذیل  چار عنوانوں کے ضمن  میں تفصیلات  پیش   کی  ہیں۔مصیبتوں سے بچانے میں دعا کی فادیت ، مصیبتوں سے محفوظ کرنے والی پندرہ دعائیں ،مصیبتوں کے دور کرنے میں دعا کی اہمیت ، مصیبتوں سے نجات دلوانے والی سولہ دعائیں۔اللہ تعالیٰ اس کتاب کو امت مسلمہ کے لیے نفع بخش بنائے ۔آمین (م۔ا)

تمہید

17

خاکۂ کتاب

21

شکرودعا

22

(1)مصیبتوں سے بچانے میں دعا کی افادیت

 

پانچ دلائل : 

 

1۔ارشادِ ربّانی:﴿قُلْ مَا یَعْبَؤُأ بِکُمْ

23

تفسیر آیت میں شیخ سعدی کا قول

23

دوعلماء کے اقوال

24

ب: ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم:  إِنَّ الدُّعَآءَ يَنْفَعُ

26

ج: ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم: ” لَا یُغْنِیْ حَذَرٌ

27

د: ارشاد نبوی صلی  اللہ علیہ وسلم : ” لَایَرُدُّ الْقَضَآءَ

29

فائدہ ٔ دعا کے متعلق اور اُس کا جواب

 

دوعلماء کےا قوال

28

ہ: ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم :  ” مَامِنْ مُّسْلِمٍ

37

(2)مصیبتوں سے محفوظ کرنے والی پندرہ دعائیں

 

تمہید

41

1۔نعمتوں کی حفاظت کرنے والا ذکر

 

  ٭(مَاشَآءَ اللہُ لَاقُوَّۃَ اِلَّا بِاللہِ )

42

آیت کریمہ ﴿ وَلَوْلَآ إِذْ دَخَلْتَ

42

امام ابن قیم کا قول

43

امام ابن قیم کا اِس پرتحریر کردہ عنوان

43

ب۔اللہ تعالیٰ کی سپرداری میں دینے والے اذکار

 

٭آیَةُ الْکُرْسِی

 

ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہو سلم : ” مَنْ قَرَأَ آیَةَ الْکُرْسِیِّ

44

٭ أَسْتَوْدِعُ اللہَ

 

قولِ  نبوی صلی اللہ علیہ وسلم :”أَسْتَوْدَعُ اللہَ

45

لقمان حکیم کا قول

46

ج۔ہرشر سے کفایت کرنے والے اذکار

 

٭ آمَنَ الرَّسُوْلُ ۔۔۔الْقَوْمِ الْکَافِرِیْنَ)

 

ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم :” مَنْ قَرَأَ بِالْاَیَتَیْنِ

47

(کفایت کرنے) سے مراد

48

٭مُعَوِّذات

 

ارشادِ نبوی : ﴿قُلْ هُوَ اللَّهُ أَحَدٌ﴾

49

(ہرچیز سے کفایت کرنے) سے مراد

51

د۔مصیبتوں سے بچانے والے اذکار

 

پڑھنے والے کو ہر ضرر سے بچانے والی دعا

 

(بِسْمِ اللّٰہِ الَّذِیْ لَایَضُرُّ)

52

پڑاؤ کے شر سے بچانے والی  دعا

 

أَعُوْذُبِکَلِمَاتِ اللّٰہِ

54

تاحیات آفت سے محفوظ کرنے والی دعا

 

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ الَّذِیْ عَافَانِی

56

بچھو کے ڈنک کے ضرر سے بچانے والی دعا

 

أَعُوْذُ بِکَلِمَاتِ اللّٰہِ

57

مصیبت سے فوت کروانے والی دعا

 

اَللّٰھُمَّ أَحْسِنْ عَاقِبَتَنَا

60

ہ۔مصیبتوں سے اللہ تعالیٰ کی پناہ طلب کرنے کی دعائیں

 

اَللّٰھُمَّ اِنِّیْ أَعُوْذُبِکَ مِنَ الْھَمِّ 

63

 اَللّٰھُمَّ اِنِّی اَعُوْذُبِکَ مِنَ الْجُنُوْنِ

65

 اَللّٰھُمَّ اَعُوْذُبِکَ مِنَ  الْھَدْمِ

66

اَللّٰھُمَّ اَعُوْذُبِکَ مِن زَوَالِ

70

(3)مصیبتوں کے دُور کرنے میں دعا کی اہمیت

 

تمہید

73

چار دلائل :

 

1۔ارشادِربانی:﴿أَمَّن يُجِيبُ الْمُضْطَرَّ﴾

74

تین مفسرین کے اقوال

75

ب: ارشاد ِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم  ” لَایُرَدُّالْقَضَآءَ

78

(دعا کے قضا کو ردّ کرنے ) کے دو معانی

79

ج: ارشادِ نبوی :  إِنَّ الدُّعَآءَ يَنْفَعُ

 

د: ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم : أَدْعُوْإِلَی اللّٰہِ عزَّوَجَلَّ

82

تین واقعات :

 

1۔قصۂ ایوب علیہ السلام :

 

ارشادِ نبوی:﴿وَأَیُّوبَ إِذْنَادیٰ

86

تفسیر آیات میں دو مفسرین کے اقوال

87

ب: قصۂ یونس علیہ السلام

 

ارشادِ نبوی : ﴿وَذَالنُّوْنِ

89

تفسیر آیات میں دو مفسرین کے اقوال

90

ج:حضرت عائشہ رضی اللہ عنہا پر بہتان کا قصہ

 

حدیثِ عائشہ  رضی اللہ عنہا

91

شرحِ حدیث میں ھافظ ابن حجر کا بیان

101

(4)مصیبتوں سے نجات دلوانے والی سولہ دعائیں

 

تمہید

103

حَسْبُنَا اللّٰہُ وَنِعْمَ الْوَکِیْلُ

 

دودلیلیں:

 

1۔حدیثِ ابن عبا س رضی اللہ عنہما: (حَسْبُنَا

104

اِن کلمات کے ساتھ دعاکی قبولیت

 

پہلی مثال

 

1۔ارشادِ ربانی :﴿قَالُوْا ابْنُوْا

106

2۔ارشادِ ربانی:﴿قَالُوْا حَرِّقُوْہُ

107

دوسری مثال :

 

ارشادِ ربانی:﴿فَانْقَلَبُوْا

108

ب:ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم :” کَیْفَ أَنْعَمُ

109

حدیث پرامام ابن حبان کا تحریر کردہ عنوان

111

حَسْبِیَ اللّٰہُ وَنِعْمَ الْوَکِیْلُ

 

حدیث ابن عبا س رضی اللہ عنہما

112

دونوں روایتوں میں تطبیق

112

لَآاِلٰهَ اِلَّا أَنْتَ سُبْحٰنَکَ

 

ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم

113

ارشادِ ربانی: ﴿وَذَالنُّوْنِ

115

تفسیر آیت میں حافظ ابن کثیرکاقول

116

کثرت سےا ستغفار کرنا

 

ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم :”مَنْ أَکْثَرَ مِنَ الْاِسْتَغْفَارِ

117

دوسری روایت:” مَنْ لَّزِمَ الْاِسْتَغْفَارَ

118

5۔تمام اوقاتِ دعا میں درود شریف پڑھنا

 

ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم :” إِذاً  تُکْفیٰ ھَمَّکَ

119

(إِذًا تُکْفیٰ ھَمَّکَ ) سے مراد

122

دو اور روایتیں

123

6۔اَللّٰہُ اَللّٰہُ رَبِّیْ لَآأُشْرِکُ بِهٖ شَیْئاً

 

دواحادیث

125

امام ابن حبان کا حدیث پرتحریر کردہ عنوان

125

7)اَللّٰہُ رَبِّیْ لَآشَرِیْکَ لَه

 

ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم

128

8)اَللّٰہُمَّ إِنِّی عَبْدُکَ

 

دواحادیث

129

دومحدثین کے حدیث پر عنوانات

133

9)اَللّٰہُمَّ رَحْمَتِکَ أَرْجُوْ

 

ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ وسلم

134

حدیث پرتین محدثین کے تحریر کردہ عنوانات

137

10)لَآاِلٰهَ اِلَّا اللّٰہُ الْعَظِیْمُ الْحَلِیْمُ

 

تین احادیث

138

اس دعا کے متعلق پانچ باتیں:

 

1۔دومحدثین  کے حدیث پرتحریر کردہ عنوانات

141

2۔علامہ نووی کی نگاہ میں ا س کی اہمیت

142

3۔سلف سالحین کا اس دعا کا اہتمام کرنا

142

4۔دعا نہ ہونے کے باوجود اِسےدعا کہنا

143

5۔اِس دعا سے سب لوگو ں کا فیض پانا

147

11۔لَآإِلٰهَ إِلَّا اللّٰہُ الْحَلِیْمُ الْکَرِیْمُ

 

حدیث ِ علی رضی اللہ عنہ

149

حسن بن حسن رضی اللہ عنہ کے دو واقعات

151

12۔یَاحَیُّ یَاقَیُّومُ بِرَحْمَتِکَ

 

حدیثِ انس رضی اللہ عنہ

157

امام ابن السُّنِّی کا حدیث پرتحریر کردہ عنوان

158

13۔اَللّٰہُمَّ إِنِّیْ أَعُوذُبِکَ مِنَ الْھَمِّ

 

حدیث انس رضی اللہ عنہ

158

روایتِ نسائی

160

14۔اَ للّٰہُمَّ لَاسَھْلَ

 

حدیث انس رضی اللہ عنہ

161

دومحدثین کے حدیث پرتحریر کردہ عنوانات

162

15۔اَ للّٰہُمَّ إِنَّا نَجْعَلُکَ فِیْ نُحُوْرِھِمْ

 

حدیث ابی موسیٰ رضی اللہ عنہ

163

تین علماء کے حدیث پرتحریر کردہ عنوانات

164

16۔إِنَّالِلّٰہِ وَإِنَّا إِلَیْهِ رٰجِعُوْنَ

 

ارشادِ نبوی صلی اللہ علیہ  وسلم

165

علامہ نووی کے حدیث پرتحریر کردہ عنوانات

168

اس مصنف کی دیگر تصانیف

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 5736
  • اس ہفتے کے قارئین 5736
  • اس ماہ کے قارئین 491928
  • کل قارئین97557232

موضوعاتی فہرست