ڈاکٹر سہیل حسن

2 کل کتب
دکھائیں

  • 1 معجم اصطلاحات حدیث (منگل 22 مئی 2012ء)

    مشاہدات:17899

    قرآن وحی متلو اور حدیث وحی غیر متلو ہے۔ اللہ تعالیٰ نے جس طرح قرآن کریم کی حفاظت کی اسی طرح محدثین کے ذریعے سے حدیث کی بھی حفاظت فرمائی۔ ائمہ حدیث نے حدیث کو تمام آلائشوں سے پاک رکھنے کی پوری سعی کی۔ صحیح احادیث کے مجموعے مرتب کیے اور ہر وہ چیز جو ہمارے دین کے لیے لازمی ہے، اسے سند کے ذریعے منتقل کیا۔ اس کے علاوہ حدیث کو قبول کرنے یا نہ کرنے کے قواعد و ضوابط وضع ہوئے جن کو اصول حدیث یا علوم مصطلح حدیث کہا جاتا ہے۔ زیر نظر کتاب بھی اس سلسلے کی ایک کڑی ہے جس میں یہ کوشش کی گئی ہے کہ اس فن کی تمام اصطلاحات جمع کر دی جائیں۔ فاضل مؤلف ڈاکٹر سہیل حسن نے اس کے لیے دو کتب سے مدد لی ہے۔ جن میں سے ایک ترکی زبان میں ڈاکٹر مجتبیٰ اوگور کا حدیث انسائیکلو پیڈیا ہے جبکہ دوسری عربی کتاب ضیاء الرحمٰن اعظمی کی ’معجم مصطلاحات الحدیث ولطائف الاسانید‘ ہے جس میں شامل تمام اصطلاحات مع تفصیل، ترجمہ کرنے کے زیر نظر معجم میں شامل کر دی گئی ہیں۔ مزید برآں اس کتاب میں بعض ایسے مباحث شامل کیے گئے ہیں جو شاید اور کسی کتاب میں یکجا نہ مل سکیں۔ مثلاً تحویل کی صورت میں اسناد پڑھنے کا طریقہ، مختلف صحابہ کی روایت کردہ احادیث کی تعداد، محدثین کرام اور ان کی مؤلفات وغیرہ۔ طالبان حدیث کے لیے یہ کتاب ایک قیمتی تحفہ ہے۔(ع۔م)
     

  • 2 علم جرح و تعدیل (بدھ 13 دسمبر 2017ء)

    مشاہدات:2835

    پچھلی صدی میں جدید تعلیم یافتہ طبقے میں سے بعض افراد کو یہ غلط فہمی لاحق ہو گئی کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ واٰلہ وسلم کی احادیث ہم تک قابل اعتماد ذرائع سے نہیں پہنچی ہیں۔ اس غلط فہمی کے پھیلنے کی وجہ یہ تھی کہ اس کو پھیلانے والے حضرات اعلی تعلیم یافتہ اور دور جدید کے اسلوب بیان سے اچھی طرح واقف تھے۔ اہل علم نے اس نظریے کی تردید میں بہت سی کتابیں لکھی ہیں جو اپنی جگہ انتہائی اہمیت کی حامل ہیں ۔ جن میں سے ایک امام ابن حجر عسقلانی رحمۃ اللہ علیہ کی "نزھۃ النظر شرح نخبۃ الفکر" ہے۔ اس کے برعکس دور جدید ہی کے ایک عرب عالم ڈاکٹر محمود طحان کی کتاب "تیسیر مصطلح الحدیث" پہلے ہی دور جدید کے اسلوب میں لکھی گئی ہے۔ ایسے ہی زیر تبصرہ کتاب ’’علم جرح و تعدیل‘‘ ڈاکٹر سہیل حسن کی ہے جس میں یہ غلط فہمی دور کرنے کی کوشش کی گئی ہےکہ یہ علم (جرح و تعدیل) انتہائی ٹوس بنیادوں پر قائم ہے، صرف سنی سنائی باتوں پر حکم نہیں لگایا گیا، بلکہ اس فن میں علمائے جرح و تعدیل، راویان حدیث کی تمام روایات کا بغور مطالعہ اور پرکھنے کے بعد کوئی رائے قائم کرتے ہیں۔اور اس کتاب علم جرح و تعدیل کے بارے میں تمام مباحث جمع کر دی  گئی ہیں۔ امید ہے یہ کتاب طلباء اور ریسرچ کرنے والے کے لئے انتہائی کار آمد ثابت ہو سکتی ہے۔ ہم  مصنف اور دیگر ساتھیوں کے لئے دعا گو ہیں کہ اللہ تعالیٰ ان کی محنتوں اور کاوشوں کو قبول فرمائے اور اس کتاب کو ان کےلئے صدقہ جاریہ بنائے۔آمین۔(رفیق الرحمن)


1 کل کتب
دکھائیں

  • 1 دنیاکےاے مسافر (پیر 16 اگست 2010ء)

    مشاہدات:18403

    یہماری دنیوی زندگی ایک سفرہے اور یہ دنیاایک سرائے ۔ہم مسافرہیں اورہماری منزل آخرت ہے ۔اب یہ ہمارے اوپرمنحصرہےکہ آخرت میں بارگاہ ایزدی میں پیشی کےلیے کس حدتک تیار کرتے ہیں ۔یہ تیاری عمل ہی کے ذریعے ہوسکتی ہے ۔جس کاعمل اللہ تعالیٰ کے احکام اورسنت رسول کے مطابق  ہوگاوہ اللہ سےملاقات کےلیے بے تاب ہوگااوراللہ تعالی ٰ بھی اپنے بندے کےلیے راستے آسان کردے گا۔اگریہ عمل اللہ تعالی ٰ کی نافرمانی ،بغاوت ،سرکشی اورخواہش نفس پرمبنی ہوگاتواللہ تعالیٰ سے ملاقات کی بجائے سزااس کی منتظرہوگی ۔زیرنظرکتاب میں اسی سفرکی تیاری کی جانب توجہ دلائی گئی ہے۔زندگی کااصل مقصد،موت کامنظراورقبروحشرکےمراحل کےساتھ ساتھ یہ بھی بتایاگیاہے کہ میت کوغسل دینے،اس کاجنازہ پڑھنے اوراظہارغم کاشرعی طریق کارکیاہے ۔بعض ایسے اعمال کی حقیقت کابھی قرآن وحدیث کی روشنی میں جائزہ لیاگیاہے ،جومعاشرے میں عمومی طورپررائج ہیں ،مثلاً ایصال ثواب اورقرآن خوانی وغیرہ ،ہرمسلمان کولازماً اس کتاب کامطالعہ کرناچاہیے تاکہ وہ سفرآخرت کی بہترتیاری کرسکے۔

     


0 کل کتب
دکھائیں

اس سائٹ پر کوئی ایسی کتاب موجود نہیں جس کی ترتیب و تخریج ان صاحب نے کی ہو۔

ایڈوانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین: 999
  • اس ہفتے کے قارئین: 11871
  • اس ماہ کے قارئین: 45892
  • کل قارئین : 47928171

موضوعاتی فہرست

ای میل سبسکرپشن

محدث لائبریری کی اپ ڈیٹس بذریعہ ای میل وصول کرنے کے لئے ای میل درج کر کے سبسکرائب کے بٹن پر کلک کیجئے۔

رجسٹرڈ اراکین

ایڈریس

        99--جے ماڈل ٹاؤن،
        نزد کلمہ چوک،
        لاہور، 54700 پاکستان

       0092-42-35866396، 35866476، 35839404

       0092-423-5836016، 5837311

       library@mohaddis.com

       بنک تفصیلات کے لیے یہاں کلک کریں