#4385

مصنف : مختلف اہل علم

مشاہدات : 2924

پندرہ روزہ جریدہ ترجمان دہلی دسمبر 2015ء

  • صفحات: 264
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 6600 (PKR)
(ہفتہ 09 اپریل 2016ء) ناشر : مرکزی جمعیت اہل حدیث، ہند

صحابی کا مطلب ہے دوست یاساتھی شرعی اصطلاح میں صحابی  سے مراد رسول  اکرم ﷺکا وہ  ساتھی ہے جو آ پ پر ایمان لایا،آپ ﷺ کی زیارت کی اور ایمان کی حالت  میں دنیا سے رخصت ہوا ۔ صحابی  کالفظ رسول اللہﷺ کے ساتھیوں کے ساتھ کے خاص  ہے  لہذاب  یہ لفظ کوئی دوسراشخص اپنے ساتھیوں کےلیے  استعمال نہیں کرسکتا۔  انبیاء  کرام﷩ کے  بعد  صحابہ کرام   کی   مقدس  جماعت تمام  مخلوق سے  افضل  اور اعلیٰ ہے یہ عظمت اور فضیلت صرف صحابہ کرام  کو ہی  حاصل  ہے  کہ اللہ  نے   انہیں دنیا میں  ہی  مغفرت،جنت اور اپنی رضا کی ضمانت دی ہے  بہت سی  قرآنی آیات اور احادیث اس پر شاہد ہیں۔صحابہ کرام  سے محبت اور  نبی کریم  ﷺ نے  احادیث مبارکہ  میں جوان کی افضلیت  بیان کی ہے ان کو تسلیم   کرنا  ایمان کاحصہ ہے ۔بصورت دیگرایما ن ناقص ہے ۔ اور صحابہ کرام کی  مقدس جماعت  ہی وہ پاکیزہ جماعت  ہے جس کی  تعدیل قرآن نے بیان کی ہے ۔ متعدد آیات میں ان کے  فضائل ومناقب پر زور دیا ہے  اوران کے اوصاف حمیدہ کو ’’اسوہ‘‘ کی حیثیت سے پیش کیا ہے ۔  اوران  کی راہ  سے انحراف کو غیر سبیل المؤمنین کی اتباع سے تعبیر  کیا ہے ۔ الغرض ہر جہت سے صحابہ کرا م  کی عدالت وثقاہت پر اعتماد کرنے  پر زور دیا ہے۔ اور علماء امت نے قرآن  وحدیث کےساتھ  تعامل ِ صحابہؓ کو بھی شرعی حیثیت سے پیش کیا ہے ۔اور محدثین نے ’’الصحابۃ کلہم عدول‘‘  کے قاعدہ کےتحت رواۃ حدیث پر جرح وتعدیل کا آغاز  تابعین سے کیا ہے۔اگر صحابہ پر کسی پہلو سے  تنقید جائز ہوتی توکوئی وجہ نہ تھی  کہ محدثین اس سے صرفِ نظر کرتے یاتغافل کشی سے کام لیتے۔ لہذا تمام صحابہ کرام کی شخصیت ،کردار، سیرت اور عدالت بے غبار ہے اور قیامت تک بے غبار رہی گئی ۔ لیکن مخالفین اسلام نے جب کتاب وسنت کو مشکوک بنانے کے لیے  سازشیں کیں تو انہوں نے سب سے پہلے  صحابہ کرامؓ ہی کو ہدف تنقید بنانا  ضروری سمجھا۔ ان  کے کردار کوبد نما کرنے  کےلیے  ہر قسم کےاتہام تراشنے سے دریغ نہ کیا۔قرآن وسنت کے مقابلہ میں تاریخی وادبی کتابوں سے چھان بین کر کے تصویر کا دوسرا رخ پیش کرنے کی سعئ ناکام کی تو  محدثین اور علمائے امت نے   مستشرقین کے  اعتراضات کے  جوابات اور دفاع صحابہ کے سلسلے میں   گراں قدر خدمات انجام دی ہیں۔ زیر تبصرہ رسالہ"ترجمان دھلی"مسلک اہلحدیث کا داعی اور مرکزی جمعیت اہلحدیث ہند کا نقیب ہے اور اس کی یہ خاص اشاعت عدالت صحابہ کے عنوان پر ہے۔اس میں متعدد اہل علم کے مقالات جمع ہیں جن میں عدالت صحابہ  سے متعلق  مباحث  سپرد قلم کیے  گئے  ہیں۔ان مباحث  سے عدالت صحابہ  سے متعلق اکثر شبہات کا ازالہ ہوجاتا ہے۔اللہ تعالیٰ  سے دعا ہے کہ وہ اس رسالے میں مقالات لکھنے والے تمام علماء کرام کی اس کا وشوں کو اپنی بارگاہ میں قبول فرمائے اور اہل اسلام کے دلوں میں صحابہ کی   عظمت ومحبت پیدا فرمائے۔ آمین(راسخ)

عناوین

صفحہ نمبر

درس قرآن (نو رہدایت )

5

درس حدیث(عدالت صحابہ )

6

اداریہ (عظمت  عدالت کے روشن مینار)

7

خطبہ استقبالیہ

10

خطبہ صدارت

13

کلمہ شکر وتقدیر پر( سپاس نامہ )

18

بعض سماجی علمی او رسیاسی شخصیات کے خطوط  وپیغامات

38

عدالت صحابہ کانفرنس سے متعلق  چند مکاتیب ومراسلات

49

عدالت  صحابہ کانفرنس کی عظیم الشان کامیابی بعض تاثرات ومشاہدات

55

اکتیسویں آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس کے موضوعات  مقررین مقالہ نگاران اور عوئین خصوصی

58

امام حرم مکی سماۃ الشیخ دکتور سعود بن ابراہیم الشریم کےوقیع خطبے 

62

اہل حدیث کمپلیکس وکھلا میں روح  افز خطاب

64

رام لیلا گراؤنڈ میں خطبہ جمعہ

66

رام الیلا میدان میں ایمان فروز خطاب

69

اکتیسویں آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس کی تفصیلی رپورٹ

72

قرار داد بمناسبت اکتیسویں آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس

92

کانفرنس سے متعلق مشارکین کے عام تاثرات

96

31واں آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس کی جلسہ گاہ ایک نظ رمیں

99

راکین مجلس استقبالیہ عدالت صحابہ کانفرنس

101

عدالت صحابہ کانفرنس سے متعلق منظومات (ماقبل مابعد کانفرنس )

108

عظیم اشان سمینار عناوین اور مختصر رپورٹ

119

31واں آل انڈیا عدالت صحابہ کانفرنس کی ابتدائی تیاریاں کب او رکیسے

125

دفتری سرگرمیوں کی ایک مختصر رپورٹ

127

31تاواں آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس کی تیاریا وفتر ی سرگرمیوں کی کہانی تصویر کی زبانی

139

کانفرنس کی تاریخ انعقاد کاعلان

139

کانفرنس کے انعقاد کی تجویز کی منظوری

140

اجلاس مجلس عاملہ اور عدالت صحابہ کانفرنس

141

سیکورٹی دیگر انتظامات کے ذمہ داروان

142

عدالت صحابہ کانفرنس پریس ریلزوں کاادرا (ماقبل ومابعد کانفرنس)

142

اکتیسویں کانفرنس سے متعلق اخباری مراسلات دلکش تحریریں اور اشتہارات

163

31واین آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس او رمیڈیا کو ریج ذی اسلام ای ٹی وی وغیرہ

180

امام کعبہ سماعۃ الشیخ ڈاکٹر سعود بن ابراہیم الشریم کی ہندوستان تشریف اور ان کا پر تباک استقبال میڈیا کی نظر میں

182

کانفرنس سے متعلق مختلف جرائد وسائل کی پر کشش تحریریں

189

میڈیا کوریج اخبارات ورسائل کی روشنی میں

196

کلمہ شکر امتنان

228

عدلت صحابہ الصحابۃ کلہم عدول

229

دہلی چلو (برائے تیتسوں  آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس 13۔12مارچ 2016ء

257

مرکزی جمعیت کی پریس ریلیز

258

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 1276
  • اس ہفتے کے قارئین 3834
  • اس ماہ کے قارئین 66752
  • کل قارئین57040930

موضوعاتی فہرست