#6434

مصنف : عطاء اللہ علوی

مشاہدات : 763

پاکستان میں خلاصۃ القرآن کے عنوان سے لکھی جانے والی کتب کا تحقیقی وتجزیاتی مطالعہ ( مقالہ ایم فل )

  • صفحات: 192
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 7680 (PKR)
(پیر 26 جولائی 2021ء) ناشر : علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی، اسلام آباد

خلاصۃ القرآن سےمراد قرآن مجید کی آیات اور سورتوں سے مستنبط ہونے والے احکام اور پیغامات الٰہی کوانتہائی مختصر اندازمیں بیان کرناکہ کم وقت میں زیادہ سے زیادہ استفادہ ممکن ہو ۔یعنی قرآن مجید کے متعدد پاروں اور سورتوں میں بکھرے ہوئے مضامین کو عامۃ الناس کی آسانی کے لیے جمع کرنے کا نام خلاصہ ہے۔ارض ِپاک وہند   میں ہماری مادری زبان عربی نہیں اس لیے   ہم  رمضان المبارک میں امام کی تلاو ت سنتے تو ہیں  لیکن  اکثر احباب قرآن کریم   کے معنیٰ اور مفہوم سےنابلد ہوتےہیں  جس کی وجہ سے   اکثر لوگ  اس  مقدس کتاب  کی تعلیمات اور احکامات  سے محروم رہتے  ہیں۔تو اس ضرورت کے پیش نظر بعض مساجد میں اس بات کا اہتمام کیاجاتا ہے کہ قراءت کی جانے  والی آیات کا خلاصہ بھی اپنی زبان میں بیان  کردیا جائے ۔ بعض اہل علم  نے  اس کو تحریر ی صورت میں مختصراً مرتب کیا ۔ تاکہ ہر کوئی قرآن کریم  سنے اور سمجھے اور اس کے دل میں  قرآن  مجید  کو پڑھنے  اور اس پر عمل  کرنے کاشوق پیدا ہو۔ زیرنظر مقالہ بعنوان’’پاکستان میں خلاصۃ القرآن کےعنوان سے لکھی جانےوالی کتب کاتحقیقی وتجزیاتی مطالعہ‘‘ عطاء اللہ علوی صاحب کاوہ تحقیقی مقالہ ہے  جیسے انہوں 2017ء میں علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی  ،کلیہ عربی وعلوم اسلامیہ میں پیش کر کےایم فل کی ڈگری  حاصل کی ہے۔یہ مقالہ چار ابواب اور ذیلی فصول پر مشتمل ہے۔باب اول   خلاصۃ القرآن کاعمومی تعارف ،آغازوارتقاء سے متعلق ہے۔باب دوم میں  پاکستان میں  خلاصۃ القرآن  کےعنوان سے  لکھی جانے والیے والی پانچ کتب کا تعارف پیش کیا گیاہے۔باب سوم میں خلاصۃ القرآن کی  ان کتب کا اسلوب اور منہج بیان کیاگیا ہےجن میں باعتبار پارہ مصنفین نےخلاصہ بیان کیا ہے۔اور باب چہارم میں خلاصۃ القرآن کےعلاوہ دوسرے ناموں سے لکھی جانے والی کتب کےاسلوب او رمنہج کو بیان کیا گیا  ہے۔مقالہ نگار خلاصۃ القرآن کی کئی  کتب کو اپنے مقالہ میں  زیر بحث لائے ہیں  نہ جانے  کیوں  مقالہ  نگار نے کسی سلفی عالم دین کی   کتاب کو اس میں شامل  نہیں کیا حالانکہ مقالہ کا عنوان تو عمومی ہے۔(م۔ا)

آن لائن مطالعہ وقتی طور پر موجود نہیں ہے - ان شاءالله بہت جلد بحال کر دیا جائے گا

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 699
  • اس ہفتے کے قارئین 24359
  • اس ماہ کے قارئین 86383
  • کل قارئین65677563

موضوعاتی فہرست