عورت کی سربراہی کا اسلام میں کوئی تصور نہیں(511#)

فضل الرحمان بن محمد
انجمن اہل حدیث مسجد مبارک لاہور
450
13500 (PKR)
9.2 MB

کتاب وسنت  کے دلائل کی رو سے امور حکومت کی نظامت مرد کی ذمہ داری ہے اور حکومتی و معاشرتی ذمہ داریوں سے ایک مضبوط اعصاب کا مالک مرد ہی عہدہ برآں ہو سکتاہے۔کیونکہ عورتوں کی کچھ طبعی کمزوریاں ہیں اور شرعی حدود ہیں جن کی وجہ سے نا تو وہ مردوں کے شانہ بشانہ مجالس و تقاریب  میں حاضر ہوسکتی ہیں اور نہ ہی سکیورٹی اور پروٹوکول کی مجبوریوں کے پیش نظر ہمہ وقت اجنبی مردوں  سے اختلاط کر سکتی ہیں ،فطرتی عقلی کمزوری بھی عورت کی حکمرانی میں رکاوٹ ہے کہ امور سلطنت کے نظام کار کے لیے ایک عالی دماغ اور پختہ سوچ کا حامل حاکم ہونا لازم ہے ۔ان اسباب کے پیش نظر عورت کی حکمرانی قطعاً درست نہیں بلکہ حدیث نبوی صلی اللہ علیہ وسلم کی رو سے اگر کوئی عورت کسی  ملک کی حکمران بن جائے تو یہ اسکی تباہی و بربادی کا پیش خیمہ ہو گی ۔زیر نظر کتاب میں کتاب وسنت کے دلائل ،تعامل صحابہ  اور محدثین وشارحین کے اقوال سے فاضل مولف نے یہ ثابت کیا ہے کہ عورت کا اصل مقام گھر کی چار دیواری ہے اور دلائل شرعیہ  کی  رو سے  عورت کبھی حکمران نہیں بن سکتی ۔پھر معترضین کے اعتراضات اور حیلہ سازیوں کا بالتفصیل رد کیا ہے  اور عورت کی حکمرانی کی راہ ہموار کرنے کے لیے فتنہ پرور مستشرقین کی فتنہ سامانیوں کو احسن انداز سے طشت ازبام کیا ہے ۔کتاب انتہائی مدلل ہے اور اپنے موضوع کی کما حقہ ترجمانی کرتی ہے ۔نیز دلائل و براہین کا ایسا انبار ہے جو افتراء پرداز علماء و نام نہاد مغربی طفیلیوں کے مصنوعی حیلوں کو خس و خاشاک کی طرح بہاتا چلا جاتا ہے ۔اس کتاب کی تالیف پر مولف حفظہ اللہ  داد کے مستحق ہیں اور موجودہ دور میں جب سارا معاشرہ ہی عورت کی حکمرانی کا قائل دکھائی دیتا ہے ۔پھر حکومتی سطح پر قومی و صوبائی پارلیمان میں عورتوں کی وزارتوں کا کوٹہ بڑھا  دینے اور الیکشن میں عورتوں کی مزید حوصلہ افزائی کی وجہ سے  اس کتاب کی اہمیت دو چند ہو گئی ہے ۔اسے گھر گھر پہنچانا مبلغین و اہل ثروت کی ذمہ داری ہے ۔
 

عناوین

 

صفحہ نمبر

تمہیدی کلمات

 

19

ڈاکٹر اسرار صاحب کا عجیب مؤقف

 

25

ہر مسلمان کا فریضہ

 

25

مرد عورتوں پر حاکم ہیں

 

27

عورت کی امامت

 

29

شیعہ کتب میں عورت کی امامت

 

31

کیا عورت مردوں کی امام بن سکتی ہے

 

32

اُم ورقہ کی امامت

 

34

ڈاکٹر احمد حسن کا استفسار

 

36

محترم ڈاکٹر حمیداللہ صاحب کا نوٹ

 

37

محترم ڈاکٹر حمید اللہ صاحب کے نوٹ کا تجزیہ

 

38

عورت کانکاح ولی کی اجازت کے بغیر نہیں ہوسکتا

 

46

کیا وراثت میں مرد اور عورت برابر ہیں؟

 

47

کیا شہادت میں مرد اورعورت برابر ہیں؟

 

48

منطقی نتیجہ

 

48

اہم سوال و حضرت عائشہ کی قیادت

 

49

رضیہ سلطانہ کی حکمرانی

 

52

ملکہ یمن بلقیس کا واقعہ

 

54

محترمہ فاطمہ جناح کا الیکشن اور مولانا مودودی کا ان کی حمایت کرنا

 

57

مولانا مودودی کا اپنا عقیدہ

 

59

حضرت مولانا اشرف علی تھانوی کا فرمان

 

63

پروفیسر محمد اسلم صاحب کا استدلال

 

63

جناب پروفیسر محمد اسلم صاحب کی بحث کا خلاصہ

 

65

فلاح سے کیا مراد ہے؟

 

65

پوران دخت کےساتھ فلاح والی حدیث کو خاص کرنا

 

72

ائمہ تفسیر کامتفقہ فیصلہ

 

75

ایک اور سوال

 

75

قرآنی رہنمائی

 

76

مسلم خواتین کی سربراہی

 

77

نواب صدیق الحسن کا تفسیری فتویٰ

 

78

صحیح بات

 

79

پروفیسر رفیع اللہ شہاب کی تحقیق

 

80

اسلامی تعلیمات کو بازیچہ اطفال نہ بنایا جائے

 

80

اسلام میں عورت کی سربراہی کے موضوع پرایک انقلاب آفرین کتاب

 

85

پاکستان ٹائمز میں چھپنے والے دو مضمون

 

88

انقلاب آفرین کتاب ’’عورت اور مسئلہ امارت‘‘

 

92

عورت کاناقص العقل اور ناقص الدین ہونا

 

93

عورت کے بارے میں غلط بیانی

 

95

عورت کاٹیڑھی پسلی سے پیدا ہونا

 

97

عورت کے قاتل کو قصاص میں قتل کرنا

 

100

عورت کی دیت

 

101

عجیب بات

 

102

ایک مجلس میں تین طلاقیں دینے کے بعد حلالہ

 

103

حدیث لن یفلح قوم ولوا امرھم امرأۃ کے بارے میں جناب رحمت اللہ طارق کا توہین آمیز و منکرانہ مؤقف

 

105

تباہی فارس کا پس منظر

 

107

تباہی فارس کسی خاتون کی قیادت کا نتیجہ نہیں تھی

 

108

عورت کی سربراہی کی حمایت کرنے والوں میں اختلاف

 

110

جناب رحمت اللہ طاق کے پیش کردہ پس منظر کا تجزیہ

 

111

لفظ ’’قوم‘‘ کی وضاحت

 

113

جناب رحمت اللہ طارق کی افسوسناک زیادتی

 

114

مضحکہ خیز تاویل

 

118

مصداق ہی غلط ہے

 

119

حضرت عائشہ کے خلاف گہری سازش

 

119

ابن حجر کا اضطراب

 

120

ہوا کا رُخ دیکھ کر

 

121

سیاسی احادیث کا اعتبار

 

123

اس حدیث کو حرمین شریفین والے نہیں جانتے تھے

 

124

یہ حدیث منقطع ہے

 

126

ایک مغالطہٰ

 

127

اس حدیث میں حدیث کا شائبہ

 

128

تدلیس کیا ہے؟

 

128

حسن بصری کا سیاسی مذہب

 

130

ابن حجر کی مایوسی

 

132

جائزہ

 

135

جائزہ

 

136

جائزہ

 

137

تبصرہ

 

138

تھیاکریسی فلسفہ عورت کا سماجی رتبہ تسلیم نہیں کرتا

 

140

امام ابوعبداللہ محمد بن اسماعیل رحمۃ اللہ علیہ

 

142

امام بخاری رحمۃ اللہ علیہ کا امتحان

 

145

علم کی عزت

 

149

امام بخاری کی وفات

 

151

صحیح بخاری

 

152

چھ لاکھ احادیث کی وضاحت

 

157

احادیث کی اہمیت

 

158

امام بخاری کے ہمعصر ائمہ کرام کی گواہی

 

160

جناب رحمت اللہ طارق کے اعتراضات

 

161

اعتراضات کا تجزیہ

 

163

اعتراضات کا جواب

 

164

حضرت ابوبکرہ رضی اللہ تعالیٰعنہ

 

165

اصل واقعہ

 

166

حضرت ابوبکرہ کا اسلام اور ان کا مقام

 

168

کتب احادیث میں حضرت ابوبکرہ کی روایات

 

169

جناب رحمت اللہ طارق کی نا سمجھی

 

174

حضرت ابوبکرہ پر حضرت عائشہ کی مخالفت کا غلط الزام

 

176

حضرت علی اور حضرت عائشہ کا مؤقف

 

183

حضرت عائشہ  کا پچھتاوا

 

183

اُم اللمؤمنین حضرت اُم سلمہ  کا ناصحانہ خط

 

186

اظہار ندامت

 

189

مضحکہ خیز تاویل کی حقیقت

 

194

کیا حضرت عائشہ نے کسی سے اپنی بیعت لی تھی؟

 

197

حضرت عائشہ کا زید بن صوحان کے نام خط اور اُس کا جواب

 

199

جنگ جمل کے بعد حضرت علی کے بارے میں حضرت عائشہ کافرمان

 

200

تجزیہ

 

201

حضرت زبیر کی جنگ سے علیحدگی

 

202

حضرت عائشہ کے خلاف گہری سازش کی حقیقت

 

205

جمہوریت

 

206

جھوٹ اور دھوکہ

 

208

حضرت ابوبکرہ کا قتال سے الگ رہنے کی وجہ

 

213

صحابی اور عظیم محدث پربہتان

 

217

صحابہ کی عدالت

 

218

قانون شہادت

 

224

حضرت عائشہ پر تہمت

 

227

حضرت مغیرہ بن شعبہ اور حضرت عائشہ کے واقعات میں فرق

 

236

حضرت عائشہ پر تہمت لگانے والوں کے ساتھ نرمی

 

237

حضرت ابوبکرہ کی گواہی

 

242

حد ہی گناہ کا کفارہ ہوتی ہے

 

247

حضرت ابوبکرہ کی احادیث پر اعتراض اور اُن کا جواب

 

250

جنگ جمل میں حصہ لینے والے سب جنتی ہیں

 

259

عورت کی سربراہی کے بارے میں حدیث مشہور کیوں نہ تھی؟

 

261

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی قبر مبارک کے بارے میں حدیث

 

263

خلافت کے بارے میں حدیث

 

264

حضرت عمر فاروق کا شام سے لوٹنا

 

266

مجوس سے جزیہ لینا

 

268

حضرت عائشہ سے حضرت ابوبکرہ کی ملاقات

 

269

مشہور نہ ہونے کی وجہ

 

270

حضرت حسن بصری

 

274

امام بخاری کی حدیث کو قبول کرنے کی شرط

 

275

حضرت حسن بصری کا محدثین کے نزدیک مرتبہ

 

278

تدلیس اور مرسل

 

284

لطیفہ

 

288

عوف بن ابی جمیلہ الاعرابی

 

289

عثمان بن الہیثم

 

294

معنعن

 

297

سارے راوی بصری ہیں

 

298

صحیح بخاری کے بارے میں حرف آخر

 

301

حمید الطویل

 

302

حافظ ابن حجر پربہتان

 

303

حمید الطویل کے بارے میں ائمہ رجال کے اقوال

 

304

مبارک بن فضالہ

 

308

دلچسپ پہلو

 

311

حماد بن سلمہ

 

311

محاسبہ

 

312

صریحا دھوکہ

 

317

حماد بن سلمہ کا تقویٰ

 

324

علی بن زید جدعان

 

325

بکاربن عبدالعزیز

 

328

محاسبہ

 

329

ایک اور زبردست دھوکہ

 

331

اپنے کھودے ہوئے گڑھے میں گرنا

 

335

محدثین اور ائمہ رجال کا طریق کار

 

338

تنقید سےمحفوظ اسناد

 

339

مختلف اسناد

 

341

امام حافظ الہیثمی المتوفی 807ھ کی تحقیق

 

345

عورت کی سربراہی کے تاریخی ثبوت کی حیثیت

 

346

ست الملک

 

346

محاسبہ

 

347

شجرۃ الدر

 

351

خلیفہ بغداد کا عورت کی حکمرانی کو ختم کرنا

 

353

رضیہ سلطانہ

 

356

ملکہ یمن

 

356

چاندبی بی

 

357

محاسبہ

 

358

رحمت اللہ طارق کی تاریخی غلطی

 

363

ترکمان خاتون

 

366

محاسبہ

 

367

ملکہ سبا کی سربراہی

 

373

وادی نمل کی ہوشیار ملکہ

 

375

جناب پرویز کے مفہوم القرآن کی ایک جھلک

 

375

ملکہ تدمرز نوبیا

 

382

محاسبہ ...... جناب رفیع اللہ شہاب کی روشن خیالی

 

383

علمائے پاکستان کا کردار

 

384

حضرت علامہ شاہ ولی اللہ محدث دہلوی

 

388

امام حافظ  ابن کثیر المتوفی 774ھ کا فرمان

 

389

امام ابوعبداللہ محمدبن احمد الانصاری القرطبی المتوفی 671ھ کا فرمان

 

390

الرجال قوامون علی النسآء

 

392

عورت علی الاطلاق قاضی نہیں ہوسکتی

 

393

علامہ ابن رشد کا فیصلہ

 

394

علامہ بدر الدین العینی کی تحقیق

 

396

ائمہ ثلاثہ کا فیصلہ

 

400

امام ابن ہمام کی وضاحت

 

402

جناب رفیع اللہ شہاب کا کذب عظیم

 

403

امام علاؤ الدین ابوبکر بن مسعود الکاسانی الحنفی المتوفی587ھ

 

403

جناب رحمت اللہ طارق کی چابکدستی

 

405

محاسبہ

 

407

نتھوبھنگی

 

408

علامہ حافظ ابن حجر عسقلانی کا فیصلہ

 

410

علامہ احمد عبدالرحمٰن البناساعاتی

 

411

علامہ ابوالعباس شہاب الدین احمد بن محمد القسطلانی المتوفی 923ھ

 

411

امام شمس الدین ابوعبداللہ الکرمانی المتوفی 786ھ

 

412

امام محمد بن علی بن محمد الشوکانی

 

412

علامہ عبدالرحمٰن مبارک پوری

 

413

امام عبدالوھاب بن احمد بن علی الشعرانی

 

414

امام ابو محمد عبداللہ بن احمد بن محمد بن قدامہ المتوفی 620ھ

 

414

الاحکام السلطانیہ

 

416

امامت

 

417

محاسبہ

 

418

وزارت

 

419

عورت کے قاضی ہونے کی نفی

 

422

شیعہ کتب میں عہدہ قضا

 

424

امام نسائی کا فیصلہ

 

425

امام شمس الدین محمد بن ابی العباس احمد بن حمزہ ابن شہاب الدین الرملی المتوفی 1004ھ

 

426

محاسبہ

 

427

فقہائے مالکیہ پربہتان

 

429

محاسبہ

 

430

مواہب الجلیل لشرح مختصر خلیل

 

434

علامہ الشیخ محمد الشربینی الشافعی

 

436

اُم المؤمنین حضرت عائشہ کا فیصلہ

 

437

مصادر و مراجع

 

439

 

اس مصنف کی دیگر تصانیف

ایڈوانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین: 916
  • اس ہفتے کے قارئین: 9782
  • اس ماہ کے قارئین: 23753
  • کل قارئین : 48410239

موضوعاتی فہرست

ای میل سبسکرپشن

محدث لائبریری کی اپ ڈیٹس بذریعہ ای میل وصول کرنے کے لئے ای میل درج کر کے سبسکرائب کے بٹن پر کلک کیجئے۔

رجسٹرڈ اراکین

ایڈریس

        99--جے ماڈل ٹاؤن،
        نزد کلمہ چوک،
        لاہور، 54700 پاکستان

       0092-42-35866396، 35866476، 35839404

       0092-423-5836016، 5837311

       library@mohaddis.com

       بنک تفصیلات کے لیے یہاں کلک کریں