الفقہ الاسلامی وادلتہ جلد دوم (حصہ سوم)

1 1 1 1 1 1 1 1 1 1
ڈاکٹر وہبہ الزحیلی
مفتی ارشاد احمد اعجاز
دار الاشاعت، کراچی
572
14300.00 (PKR)
title-pages-1-copy

ہر دور میں اہل علم نے مختلف موضوعات پر بڑی بڑی ضخیم کتابیں لکھی ہیں۔فقہ وحدیث اور تاریخ وفلسفہ اورطب وحکمت میں سے کوئی ایسا عنوان نہیں ہے ،جس پر ہمیں قدیم علمی سرمائے میں انفرادی کاوشوں کے حیرت انگیز مجموعے نہ ملتے ہوں۔مثلا امام سرخسی ﷫کی عظیم الشان کتاب المبسوط بارہ ضخیم جلدوں پر مشتمل ہے اور اسلامی فقہ کا ایک مکمل مجموعہ ہے۔اسی طرح امام قلقشندی ﷫کی کتاب صبح الاعشی متعدد علوم ومعارف کا ایک خزانہ ہے۔موجودہ اصطلاح میں آپ اسے انسائیکلوپیڈیا نہ بھی کہیں تو بھی اپنی جامعیت اور وسعت کے لحاظ سے ان سے وہی ضرورت پوری ہوتی ہے جو آج کے د ور میں انسائیکلو پیڈیاز پوری کرتے ہیں۔ عصر حاضر کے  تقاضوں کو سامنے رکھتے ہوئے  چند مسلمان مفکرین اور بعض اسلامی اداروں نے اب انسائیکلوپیڈیاز کی تیاری کی طرف بھی اپنی توجہ مبذول کی ہے۔ایک  انسائیکلو پیڈیا وزارت اوقاف کویت کے زیر اہتمام تیار کیا جا رہا ہے اور الموسوعہ الفقہیہ کے نام سے اب تک اس کی متعدد جلدیں چھپ چکی ہیں۔ڈاکٹر عبد الستار ابو غدہ ﷾جیسی فاضل شخصتیں اس کام کا بیڑہ اٹھائے ہوئے ہیں۔اسلامی فقہ کا انسائیکلوپیڈیا تیار کرنے کے لئےاب تک جو کاوشیں ہوئی ہیں،ان میں سے ایک کوشش اس وقت آپ کے سامنے ہے۔یہ سلسلہ عالم عرب کے  معروف عالم دین استاذ  ڈاکٹر وھبہ زحیلی﷫رکن مجمع الفقہ الاسلامی کی کاوش ہے۔جنہوں نے فقہ اسلامی کو اپنا تدریسی وتحقیقی شعار بنا لیا ہے اور اس  میدان میں کارہائے نمایاں سر انجام دے چکے ہیں۔ زیر تبصرہ کتاب "الفقہ الاسلامی وادلتہ" اسی انسائیکلو پیڈیا کی ایک جلد ہے۔یہ کتاب چھ ضخیم جلدوں پر مشتمل ہے،جس کا اردو ترجمہ محترم مولانا مفتی ارشاد احمد اعجاز﷾ اور محترم مفتی ابرار حسین صاحب﷾ سمیت دیگر  تین چار حضرات نے کیا ہے۔یہ کتاب دور حاضر کے فقہی مسائل، ادلہ شرعیہ، مسالک اربعہ  کے فقہاء کی آراء اور اھم فقہی نظریات پر مشتمل دور جدید کے عین مطابق مرتب کردہ ایک علمی ذخیرہ ہے۔اللہ تعالی سے دعا ہے کہ وہ مولف موصوف کی اس کاوش کو قبول فرمائے اور ان کے میزان حسنات میں اضافہ فرمائے۔آمین(راسخ)

عناوین

 

صفحہ نمبر

مقدمہ

 

 

                                          بسم اللہ الر حمن الر حیم

 

 

                                            فہرست مضامین ۔۔جلد سوم

 

 

 

اصلاحات

 

33

پہلی فصل : روزہ

 

36

مباحث

 

36

صوم کی تعریف

 

37

روزے کا تعریف

 

37

روزے کاوقت

 

38

طویل النہار مقامات میں  روزے کا وقت

 

38

روز ے کے فوائد

 

39

روزہ تقوٰی واطاعت کا اہم ذریعہ ہے

 

39

روزہ صبر و ستقامت  کااہم ذریعہ ہے

 

39

روزہ ہمیں امانتداری کا درس دیتا ہے

 

39

روزہ خدا دا د قوتوں کے لیے مقوی ہے

 

39

روزہ ایک دستور العمل ہے

 

40

روزہ اخوت و بھائی چارے کا درس دیتا ہے

 

40

روزہ زندگی  ہے

 

40

روزہ مزیل   شہوت ہے

 

40

ابن ہمام کی رائے میں روزے کی حکمت

 

42

صاحب ایضاح کی رائے

 

42

دوسرا مقصد: رمضا ن اور لیلۃ القدر کی فضیلت

 

43

احادیث میں رمضان المبارک کی فضیلت

 

43

لیلۃ القدر کے اخفاء میں حکمت

 

46

لیلۃ القدر میں کی جانے والی دعا

 

46

لیلۃ القدر کی علامات

 

46

تیسرا مقصد : رمضان کے اہم تاریخی واقعات

 

46

نزول قرآن

 

46

معرکہ بد ر کبریٰ

 

47

فتح مکہ

 

ٍ47

غزوہ تبوک

 

48

انہدام عزیٰ

 

48

انہدام لات

 

48

واقعہ زلا قہ

 

48

واقعہ عین جالوت

 

48

فتح اندلس

 

48

دوسری بحث : روزے کی فرضیت اور روزے کی اقسام

 

49

روزے کی فرضیت اور اس کی تاریخ

 

49

کتاب اللہ

 

49

روزے  کی اقسام

 

50

احناف کے نزدیک روزے کی اقسام

 

50

لازمی روزہ حنیفہ کے نزدیک

 

50

دوسری قسم: حرام روزہ

 

51

عورت کا نفلی روزہ رکھنا

 

51

یوم  شک کا روزہ

 

51

علامہ درد یر اور دسوقی کی رائے

 

52

عیدین اور ایام تشریق کا روزہ

 

53

حیض ونفاس میں روزہ رکھنا

 

54

نصف شعبان کے بعد روزہ

 

54

تیسری قسم: مکروہ روزہ

 

54

مکروہ تحریمی

 

54

مکروہ تنزیہی

 

55

چوتھی قسم : نفلی روزہ اور مستحب روزہ

 

57

شوال کے چھ روزے

 

58

عرفہ کے دن کا روزہ

 

58

عاشورہ کا روزہ

 

59

حرمت والے مہینوں کا روزہ

 

59

مند وب روزے کے متعلق مذاہب

 

60

مستحب یا مندوب

 

60

ایام بیض اور ایام سودکے روزوں کی حکمت

 

61

کیا نفلی روزہ شروع کرنے سے لازم ہوجاتاہے

 

61

پہلا نظریہ

 

62

دوسرا نظریہ

 

63

تیسری بحث: روزہ کب واجب ہوتا ہے ، چاند کے اثبات

 

64

کی کیفیت : روزہ کب واجب ہوتاہے ؟

 

64

وجوب رمضان

 

64

دوسرامقصد : رمضان اور شوال کے چاند کے اثبات کی کیفیت

 

65

بقیہ مہینوں میں رؤیت ہلال کاحکم

 

67

رؤیت کے متعلق بقیہ مسائل

 

68

اگر مہینوں کی تعیین میں التباس پڑجائے

 

68

خلاصہ کلام

 

69

رؤیت ہلال کی جستجو

 

69

چاند دیکھنے کے وقت کی دعائیں

 

70

تیسرا مقصد : اختلاف مطالع

 

70

عقل سے

 

70

جمہور کے دلائل

 

73

علامہ صنعانی رحمۃ اللہ علیہ کی رائے

 

73

علامہ شوکانی رحمتہ اللہ علیہ کی رائے

 

73

مصنف کے نزدیک معتمد مسلک

 

73

علم فلکیات کا نقطہ نظر

 

74

چوتھی بحث: روزہ واجب ہونے کی شرائط

 

74

ثمرہ اختلاف

 

74

اگر کافر رمضان  میں اسلام قبول کرے

 

74

اگر کافر دن کے وقت اسلام قبول کرے

 

75

بلو غ اورعقل

 

75

بچے کا روزہ

 

75

بچہ اگر دن کے وقت بالغ ہوجائے

 

76

بے ہو ش کا روزہ

 

76

مجنون کا روزہ

 

76

قدرت اور اقامت ( مرض سے صحت یابی)

 

78

دوسرامقصد :روزہ صحیح ہونے کی شرائط

 

79

شرط طہارت

 

79

روزے کی نیت

 

80

نیت کی تعریف

 

80

نیت شرط ہے یا رکن

 

80

نیت شرط ہے یارکن

 

80

نیت شرط ہے

 

80

نیت رکن ہے

 

81

نیت کا محل

 

81

نیت کی شرطیں

 

81

رات کو نیت کرنا

 

81

روزے کی دو قسمیں

 

81

وہ قسم جس کیلئے  رات کو نیت شر ط ہے اور تعیین بھی شرط ہے

 

81

وہ قسم جس کے لیے  رات کے وقت نیت کا ہونا شرط نہیں اور

 

81

تعیین بھی شرط نہیں

 

 

فرض میں نیت کی تعیین

 

83

جزم نیت

 

84

انشاء اللہ کہہ کر روزہ رکھنا

 

84

رمضان کا آخری روزہ شک سے رمضان ہی کا ہو گا

 

84

اگر قیدی پر رمضان مشتبہ  ہوجائے

 

84

فرضیت کی نیت

 

85

متعد د ایام کے ساتھ ساتھ نیت بھی متعدد ہو

 

85

نیت کی صفت اور اس کا بھی اثر

 

85

کیا سحری نیت کے قائم مقام ہے

 

85

نیت کا اثر

 

85

روزے کی شرائط کے متعلق مختلف مذاہب کا خلاصہ

 

86

شرائط وجوب

 

86

شرائط وجوب ادا

 

86

شرائط صحت ادا

 

87

شرائط صحت

 

87

شرائط وجوب و صحت معا

 

87

حیض و  نفاس سےپا ک ہونا

 

87

اسلام  بحالت روزہ

 

87

عقل یا تمیز

 

87

پورادن حیض ونفاس سے پاک رہنا

 

89

وقت کا روزے کا قابل ہونا

 

89

روزے کی قدرت ہونا

 

90

پانچویں بحث: روزے کی سنتیں ، آداب اور مکروہات

 

90

پہلا مقصد : روزے کی سنتیں اور آداب

 

90

سحری کھانا

 

90

افطار میں جلدی کرنا

 

91

افطار کے بعد دعا کرنا

 

91

روزہ داروں کو افطاری کرانا

 

91

فجر سے قبل پاکی کا غسل کرلینا

 

92

زبان اعضا ء کو قابو میں رکھنا

 

92

ترک شہوات

 

93

پچھنے اور سینگی لگوانا

 

93

عیا ل پر وسعت کرنا

 

93

نیکی کے کاموں میں مشغو ل رہنا

 

93

باقی فضائل والے اعمال

 

93

دوسرا  مقصد : روزے کے مکروہات

 

94

صوم و صال

 

94

مذاہب میں مکروہات کا خلاصہ

 

95

چھٹی بحث : ان اعذار کا بیان جن کی وجہ سے روزہ توڑنا

 

99

مباح ہوجاتاہے

 

98

سفر کا لغوی معنی

 

98

وہ سفر جس میں روزہ رکھنا مبا ح ہے

 

99

جمہور کی شرط

 

99

کیا صبح کو روزہ رکھ کر افطار کرنا جائزہے

 

99

شافعیہ کی ایک اور شرط

 

99

مسافر کے لیے روزہ رکھنا فضل ہے یا رخصت افضل ہے ؟

 

100

کیا رمضان میں کوئی دوسرا روزہ رکھا جاسکتا ہے

 

101

ظاہر یہ کا جمہور کے ساتھ ایک اختلاف

 

101

جو شخص بظاہر صحیح لگتاہو

 

102

حاملہ اور مرضعہ کی قضاء

 

103

قریب البلوغ لڑکا اگر روزہ توڑدے

 

104

جو شخص مشقت طلب کام کرے

 

104

ڈوبتے کو بچانا

 

105

عذر کی وجہ سے روزہ توڑنے کے بعد امسا ک

 

105

ساتویں بحث: ان چیزوں کا بیان جو روزے کو فاسد کردیتی

 

107

ہیں اور جو روزے کو فاسد نہیں کرتیں

 

 

اول: وہ امور جو مفسد صوم ہیں اور صرف قضاء کو واجب

 

107

کرتےہیں نہ کہ کفارہ کو

 

 

ملحقات

 

109

دوم: ان امور کا بیان جو روزے کو فاسد کردیتےہیں اور اس

 

109

کی پاداش میں قضاء اور کفار دونوں واجب ہوں

 

 

وہ امور جس سے روزہ فاسد نہیں ہوتا

 

111

روزے کی یاددہانی

 

111

اول: وہ امور جس سے روزہ فاسد ہوتاہے اور صرف قضاء

 

113

واجب ہوتی ہے

 

 

پانچ مفطرات : وہ امور  جو روزہ توڑ دیتے ہیں وہ پانچ ہیں

 

114

منفذ کا اعتبار

 

 

جائفہ

 

114

وجوب قضاء

 

114

دوم:  وہ امور جن سے روزہ فاسد ہوجاتاہے اور  قضاء اور

 

115

کفار ہ دونوں واجب ہوتےہیں

 

 

کفارے کی شرائط

 

115

تاویل بعید

 

116

وہ امور جس روزہ فاسد نہیں ہوتا

 

116

اول : وہ امور  جن سے روزہ فاسدہ ہو جاتا ہے اور صر ف قضاء

 

117

واجب ہوتی ہو

 

 

دوم: وہ امور جن سے قضا ء کفارہ اور تعزیر واجب ہوتی ہو

 

120

کفارہ عوارض سے ساقط نہیں ہوتا

 

122

روزے کی قضاء

 

122

شافعیہ کے نزدیک  وہ امور جن سے روزہ فاسد نہیں ہوتا

 

122

دوم: وہ امور جن سے قضا ء اور کفارہ  دونوں واجب ہوں

 

125

کفارہ میں تعدد

 

126

وجوب امساک پر کفارہ ہے

 

127

جماع فیماد ون الفرج

 

127

رمضان کے علاوہ روزے کے فساد پر کفار ہ نہیں

 

127

روزہ میں جماع کا جواز  حنا بلہ کے نزدیک

 

127

وہ امور جن سے روزہ فاسد نہیں ہوتا

 

128

دوم : قضاء کا حکم

 

131

کون سے روزے کی قضا ء واجب ہے

 

131

رمضان کی قضا ء  کا وقت

 

131

کیا میت کے ترکہ سے کھانا کھلانا واجب ہے ؟

 

133

دوسرا مقصد : کفارہ

 

133

کفارہ کا موجب

 

134

فاسدروزے کی قضاء

 

134

اقسام کفارہ

 

135

کیا فقیر کفارہ اپنے اہل و عیال کو کھلا سکتا ہے ؟

 

137

شافعیہ کے نزدیک عدول

 

137

ادائے کفارہ کی نیت

 

137

تعد د کفارہ

 

137

عمد ا فطر کے بعد عذر کا پیش آنا

 

138

تیسرا مقصد : فدیہ کا بیان

 

138

فدیہ کا مصرف

 

139

فدیہ کا سبب

 

139

حنفیہ کی تجویز

 

139

اگر مریض مرجائے

 

140

مصنف کی رائے

 

140

فدیہ میں تکرار

 

141

فدیہ ، کفارہ اور نذر کا وقت

 

141

مصنف کی مزید تصانیف

title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-1-copy
title-pages-bain-ul-aqwami-taluqaat

ای میل سبسکرپشن

محدث لائبریری کی اپ ڈیٹس بذریعہ ای میل وصول کرنے کے لئے ای میل درج کر کے سبسکرائب کے بٹن پر کلک کیجئے۔

 

ایڈوانس سرچ

موضوعاتی فہرست

رجسٹرڈ اراکین

آن لائن مہمان

محدث لائبریری پر اس وقت الحمدللہ 2273 مہمان آن لائن ہیں ، لیکن کوئی رکن آن لائن نہیں ہے۔

ایڈریس

       99-جے ماڈل ٹاؤن،
     نزد کلمہ چوک،
     لاہور، 54700 پاکستان

       0092-42-35866396، 35866476، 35839404

       0092-423-5836016، 5837311

      KitaboSunnat@gmail.com

      بنک تفصیلات کے لیے یہاں کلک کریں