#4178

مصنف : حافظ مہر محمد میانوالوی

مشاہدات : 2518

حرمت ماتم اور تعلیمات اہل بیت ؓ

  • صفحات: 0
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 0 (PKR)
(ہفتہ 05 مارچ 2016ء) ناشر : ادارہ تحقیقات عثمانیہ،گوجرنوالہ

 واقعہ کربلا نبی کریم ﷺ کی وفات اور دین محمدی کی تکمیل کے تقریباً 50 سال بعد پیش آیا۔ یہ ایک تاریخی سانحہ ہے لیکن  اس واقعہ کی وجہ سے شیطان کو بدعتوں اور ضلالتوں کے پھیلانے کا موقع مل گیا۔چنانچہ کچھ لوگ ماہ محرم کا چاند نظر آتے ہی اور بالخصوص دس محرم میں نام نہاد محبت کی بنیاد پر سیاہ کپڑے زیب تن کرتے ہیں ۔سیاہ جھنڈے بلند کرتے ہیں ۔نوحہ و ماتم کرتے ہیں ۔ تعزیے اور تابوت بناتے ہیں۔ منہ پیٹتے اور روتے چلاتے ہیں۔ بھوکے پیاسے رہتے ہیں۔ ننگے پاؤں پھرتے ہیں۔ گرمی ہو یا سردی، جوتا نہیں پہنتے۔ نوحہ اور مرثیے پڑھتے ہیں۔ عورتیں بدن سے زیورات اتاردیتی ہیں۔ ماتمی جلوس نکالے جاتے ہیں ۔ زنجیروں اور چھریوں سے خود کو زخمی کیا جاتاہے۔ سیدنا حسین  اور دیگر شہداءکی نیاز کا شربت بنایا جاتاہے۔ پانی کی سبیلیں لگائی جاتی ہیں۔ماتم سمیت مذکورہ تمام کام شرعا حرام اور ممنوع ہیں۔اہل بیت سمیت تمام صحابہ کرام  کا ان بدعات کی حرمت پر اتفاق تھا۔ زیر تبصرہ کتاب "حرمت ماتم اور تعلیمات اہل بیت" محترم حافظ مہر محمد میانوالوی صاحب کی تصنیف ہے، جس میں انہوں نے اہل بیت کی تعلیمات کی روشنی میں ماتم کی حرمت کو ثابت کیا ہے اور صبر کی ترغیب دی ہے۔اللہ تعالی سے دعا ہے کہ وہ مولف کی اس محنت کو اپنی بارگاہ میں قبول فرمائے اور ان کے میزان حسنات میں اضافہ فرمائے۔آمین(راسخ)

عناوین

صفحہ نمبر

تقدیم

1

حکام وانصاف پیشہ حضرت کے لیے

10

مختصر تاریخ اسلام

12

سانحہ کربلاکامختصر ذکر

14

حادثہ کو بلاکے دین پر اثرات

17

محمدی اسلام اورماتمی اسلام کا40باتوں میں تقابل

18

مقام حسین ؓاورعزاکی آڑمیں اسلام کشی

26

غزاداری کےملی ملکی اور اخلاقی نقصانات  15دلائل عقلیہ کی روشنی میں

30

قارئین سے گزارش

39

اہل السنت والجماعت کےمطالعہ کے لیے

39

باب اول

40

صبر ماتم اور تعلیمات قرآنی (50آیات)

41

حرمت ماتم پر صریح دس آیات

48

باب دوم

 

صبروماتم اور تعلیمات محمدی

53

اہل السنۃوالجماعۃ کی 25مرفوع احادیث

58

طبعی غم پغمیبر کو بھی ہوتا ہے

58

صبرکاوقت صدمہ کاوقت ہے

59

اپنے قریبی بھی ماتم سے آپ نےمنع فرمایا

59

ماتم سے میت کو عذاب ہوتاہے

60

آواز سے رونا حرام ہے

61

میت کی تعریف میں مبالغہ عذاب کاباعث ہے

62

ماتم کرنے والے حضور کی امت سے خارج ہیں

62

ماتم میں لباس بدلنا بھی جاہلیت ہے

64

میت پررونے سے رحمت کے فرشتے دور ہوجاتے ہیں

64

مصیبت کےوقت صبر کابہت بڑاثواب ہے

65

احادیث مذکورہ کاخلاصہ

67

شیعہ حضرات کی توجہ کی لیے ستر احادیث مستند کتب شیعہ سے

67

ماتم ونوحہ کی حرمت پر کتب شیعہ سے مرفوع احادیث

69

ماتم جاہلیت کاشعار

69

ماتم وبین کی سزا

69

ماتم سے حضور نے منع فرمایا

69

ماتم سےاعمال صالحہ برباد ہوجاتے ہیں

71

حضرت فاطمہ ؓ کوحضور نے صبر کی وصیتیتں فرمائیں

72

خدانےبھی کی وصیت نازل فرمائی

73

باب سوم

 

صبر وماتم اور تعلیمات اہل بیت

74

حضرت علی ؓ کے ارشادات

76

حضرت امام حسن ؓکاارشاد وعمل

78

حضرت امام حسین ؓ کی وصایا

79

حضرت زین العابدین کے ارشادات

82

حضرت امام باقر کے ارشادات

85

اہم مصیبت پر حضور کی موت یاد کرو

86

حضرت امام جعفر صادق کےارشادات

87

میت پر بین کرنا اور کپڑے پھاڑنا حرام ہے

87

تعلیمات اہل بیت کاخلاصہ

88

نوٹ مذہب شیعہ کی بنیادی کمزوری

91

دلائل مذکورہ کامعارض نہیں

95

باب چہارم

 

مروجہ ماتم وغزاداری بدعت ہے

97

بدعت کی مذمت احادیث سے

97

بدعت کی تعریف

99

بدعات غزاواری کی ایجاد وتاریخ

102

تعزیہ کی اقسا م

102

مروجہ عزاواری شرک ہے

104

دبت پرستی کی حقیقت

104

ماتم وعزاواری کی ایجاد وتاریخ

107

مجتہدین شیعہ بھی عزاواری  کو حرام کہتے ہیں

109

علامہ الفت حسین صاحب کافتوی

109

علامہ محمد حسین کافتوی اقتباسات کی روشنی میں

109

بدعتی پراما جعفر صادق کافتوی

112

تعزیہ بنانیواالاخارج اور اسلام ہے شیخ صدوق

113

ماتم غناکی وجہ سے بھی حرام ہےامام حسین کاظمی

113

غنا کی تعریف وتشریح

115

مرثیہ محوانی وغیرہ بھی یقینا غنا ہے

116

باب پنجم

 

 اہل ماتم کے سطحی شبہات اور ان کےجوابات

120

ہر دلیل عزاکےرد پر وس اصولی مقدمات

120

1۔قرآن مستقبل حجت نہیں

120

2۔خلاف قرآن احادیث مردووہوں گی

122

3۔استدلال کے چار طریقے

122

4۔ترجیح کےاسباب

123

5۔استدلال صرف صحاح سے ہوگا

123

6۔نصوص کے مقابلے میں قیاس

124

یاعمل عوام سے استدالال باطل ہے

124

7۔مقربین الہی کی طرف گناہ کی نسبت بڑی جسارت ہے

125

آپ کے براؤزر میں پی ڈی ایف کا کوئی پلگن مجود نہیں. اس کے بجاے آپ یہاں کلک کر کے پی ڈی ایف ڈونلوڈ کر سکتے ہیں.

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 1312
  • اس ہفتے کے قارئین 8781
  • اس ماہ کے قارئین 25788
  • کل قارئین55213907

موضوعاتی فہرست