اتحاد اسلامک ریسرچ اینڈ دعوت سنٹر، لکھنؤ

1 1 1 1 1 1 1 1 1 1
اتحاد اسلامک ریسرچ اینڈ دعوت سنٹر، لکھنؤ
لکھنؤ
    pages-from-neki-ki-raah
    عبد المحسن بن محمد القاسم

    ہم سب جانتے ہیں کہ ہماری نجات اسی وقت ممکن ہے جب ہمارے نامہ اعمال میں نیکیاں گناہوں کے مقابلے میں زیادہ ہوں۔ لیکن سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ نیکی کس عمل یا عقیدے کا نام ہے؟ کیا نیکی کا تصور محض نماز روزہ حج زکوٰۃ اور دیگر ظاہری عبادات تک محدود ہے یا اس کا دائرہ کار زندگی کے ہر معاملے تک پہنچتا ہے؟ کیا اس کی کوئی فہرست قرآن و سنت میں موجود ہے یا اسے عقل و فطرت سے بھی متعین کیا جاسکتا ہے؟کیا ہر نیکی کا وزن اس کی گنتی کے لحاظ سے ہے یا اس کی کمیت یعنی کوالٹی کے اعتبار سے متعین ہوتا ہے؟ کیا نیکی صرف ظاہری عمل کا نام ہے باطنی نیت بھی نیکی میں شامل ہو سکتی ہے؟ قرآن وسنت کے مطالعہ سے معلوم ہوتا ہےکہ نیکی سے مراد ہر وہ عمل ہے جو خدا کی بیان کردہ حلا ل و حرام کی حدود قیود میں رہتے ہوئے خلوص نیت اور خوش اسلوبی کے ساتھ کیا جائے اور جس کا مقصد کسی بھی مخلوق کو جائز طور پر فائدہ پہنچانا ہو۔ زیر تبصرہ کتاب ’’نیکی کی راہ ترجمہ خطوت إلى السعادة‘‘ مسجد نبوی کے امام وخطیب ڈاکٹر عبد المحسن بن محمد القاسم کی عربی کتاب ’’خطوت إلى السعادة‘‘ کا اردو ترجمہ ہے۔ شیخ موصوف نے اس کتاب میں مختلف موضوعات سے متعلق کتاب وسنت اور اقوال سلف کے ایسے قیمتی موتیوں کو اکٹھا کیا ہے جو انسان کو عموماً اور مسلمانوں کو خصوصاً سعادت و کامرانی کے کنارے تک پہنچاتے ہیں اور جو بھی انسان ان موتیوں کو چن کر اپنے لیے حرزِجان بنائے گا وہ فوز وفلاح سے ہمکنار ہوگا۔ نیز اللہ تعالیٰ کی رضا و خوشنودی اور اس کی جنت کا حقدار بنے گا۔کتاب کی افادیت کے پیش نظر فاضل نوجوان محمد عمران سلفی (فاضل جامعہ سلفیہ، بنارس) نے اردوداں طبقے کے لیے اس کتاب کو اردو قالب میں ڈھالا ہے۔ اللہ تعالیٰ کتاب کے ہذا مصنف ،مترجم اور ناشرین کی اس کاوش کو قبول فرمائے اوراسے عوام الناس کے لیے نفع بخش بنائے۔ (آمین) (م۔ا)

    title-pages-neki-ki-raah--abu-bakar--copy
    عبد المحسن بن محمد القاسم

    یکی اور بھلائی کے راستے کئی قسم کے ہیں تاکہ بندہ اللہ تعالیٰ کی رضا کے حصول کیلئے مختلف اوقات میں اطاعت کے مختلف کام سر انجام دے اور اس میں نشاط برقرار رہے۔ بندہ اگر ایک عمل سے اکتا جائے تو دوسرا عمل کرلے۔ وہ اس طرح کہ جس وقت میں جو کام کرنا ہے وہی کیا جائے، یعنی نماز کے وقت نماز ادا کی جائے، جہاد کے وقت جہاد اور اگر مہمان آجائے تو اس وقت اس کی ضیافت کی جائے اور اس کی مہمانی کا حق ادا کیا جائے۔ پس ایسا شخص جو رسم رواج کا پابند نہیں ہوتا بلکہ ہر کام اللہ تعالیٰ اور اس کے رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے بتائے ہوئے وقت اور طریقے پر کرتا ہے تو اس کے لیے خوش خبری ہے اور اس کا انجام بھی بہتر ہے۔ زیر تبصرہ کتاب ’’نیکی کی راہ‘‘ مسجد نبوی کے امام و خطییب ڈاکٹر عبد المحسن بن محمد القاسم کی کتاب ’’خطوات إلى السعادة‘‘ کا اردو ترجمہ ہے ، شیخ محترم تقوی وطہارت اور حسن صفات کے ساتھ ساتھ مسجد نبوی کے امام وخطیب ہونے کی وجہ سے پوری دنیا میں قدر و منزلت کی نگاہ سے دیکھے جاتے ہیں۔آپ نے اس کتاب میں مختلف موضوعات سے متعلق کتاب و سنت اور اقوال سلف کی ایسی قیمتی موتیوں کو اکٹھا کیا ہےجو انسان کو عموما اور مسلمانوں کوخصوصا سعادت وکامرانی کے کنارےتک پہنچاتی ہیں نیز وہ اللہ کی رضا و خوشنودی اور جنت کا حقدار بنے گا۔ کتاب کی افادیت کو سامنے رکھتے ہوئے ہمارے فاضل بھائی محمد عمران سلفی فاضل جامعہ سلفیہ نے اس کو اردو کا جامہ پہنایا ہے۔ اللہ تعالیٰ سے دعا ہےکہ رب العالمین کتاب کو مفید عام بنائےاور اس کے مؤلف و مترجم اور کتاب کی تیاری وطباعت کے مرحلہ تک پہنچانے میں جن لوگوں نے بھی تعاون کیا ہےان کے لیے اسے ذخیرۂ آخرت بنائے۔ آمین۔ (رفیق الرحمن)

ای میل سبسکرپشن

محدث لائبریری کی اپ ڈیٹس بذریعہ ای میل وصول کرنے کے لئے ای میل درج کر کے سبسکرائب کے بٹن پر کلک کیجئے۔

 

ایڈوانس سرچ

رجسٹرڈ اراکین

آن لائن مہمان

محدث لائبریری پر اس وقت الحمدللہ 352 مہمان آن لائن ہیں ، لیکن کوئی رکن آن لائن نہیں ہے۔

ایڈریس

       99--جے ماڈل ٹاؤن،
     نزد کلمہ چوک،
     لاہور، 54700 پاکستان

       0092-42-35866396، 35866476، 35839404

       0092-423-5836016، 5837311

      KitaboSunnat@gmail.com

      بنک تفصیلات کے لیے یہاں کلک کریں

 :