اقضیۃ الرسول صلی اللہ علیہ وسلم ( اردو ترجمہ )

1 1 1 1 1 1 1 1 1 1
محمد بن الفرج ابن الطلاح الاندلسی
ڈاکٹر محمد ضیاء الرحمن الاعظمی
ادارہ معارف اسلامی منصورہ لاہور
795
19875.00 (PKR)
title-pages-aqziya-al-rasool--saww--urdu-tarjuma-copy

کسی بھی قوم کی نشوونما اور تعمیر  وترقی کےلیے  عدل وانصاف ایک بنیادی ضرورت ہے  ۔جس سے مظلوم کی نصرت ،ظالم کا قلع  قمع اور جھگڑوں کا  فیصلہ کیا جاتا ہے  اورحقوق کو ان کےمستحقین تک پہنچایا جاتاہے  اور  دنگا فساد کرنے والوں کو سزائیں دی جاتی ہیں  ۔تاکہ معاشرے  کے ہرفرد کی جان  ومال ،عزت وحرمت اور مال واولاد کی حفاظت کی جا  سکے ۔ یہی وجہ ہے  اسلام نے ’’قضا‘‘یعنی قیام ِعدل کاانتہا درجہ اہتمام کیا ہے۔اوراسے انبیاء ﷩ کی سنت  بتایا ہے۔اور نبی کریم ﷺ کو اللہ تعالیٰ نے  لوگوں میں فیصلہ کرنے کا  حکم  دیتےہوئے  فرمایا:’’اے نبی کریم ! آپ لوگوں کےدرمیان اللہ  کی  نازل کردہ ہدایت کے مطابق فیصلہ کریں۔‘‘نبی کریمﷺ کی  حیاتِ مبارکہ مسلمانوں کے لیے دین ودنیا کے تمام امور میں مرجع کی حیثیت رکھتی ہے ۔ آپ کی تنہا ذات میں حاکم،قائد،مربی،مرشد اور منصف  اعلیٰ کی تمام خصوصیات جمع تھیں۔جو لوگ آپ کے فیصلے پر راضی  نہیں ہوئے  ا ن کے بارے  میں اللہ تعالیٰ نے  قرآن کریم میں سنگین وعید نازل فرمائی اور اپنی ذات کی  قسم کھا کر کہا کہ آپ  کے فیصلے تسلیم نہ کرنے  والوں کو اسلام سے خارج قرار دیا ہے۔نبی کریمﷺ کےبعد  خلفاء راشدین  سیاسی قیادت ،عسکری سپہ سالاری اور دیگر ذمہ داریوں کے ساتھ  منصف وقاضی کے مناصب پر بھی فائزر ہے اور خلفاءراشدین نےاپنے  دور ِخلافت  میں دور دراز شہروں میں  متعدد  قاضی بناکر بھیجے ۔ائمہ محدثین نےنبی ﷺ اور صحابہ کرام  کے  فیصلہ جات کو  کتبِ  احادیث میں نقل کیا ہے  ۔اور کئی اہل علم  نے   اس سلسلے میں   کتابیں تصنیف کیں ان میں سے   زیر تبصرہ اہم  کتاب امام ابو عبد اللہ  محمدبن  فرج  المالکی   کی  نبی  کریم ﷺ کے  فیصلوں پر مشتمل   ’’اقضیۃ الرسول  ﷺ ‘‘ ہے  ۔ یہ کتاب  ان فیصلوں اورمحاکمات پر مشتمل ہے جو  نبی ﷺ نے اپنے 23 سالہ دور نبوت میں مختلف مواقع پر صادر فرمائے۔یہ  عظیم الشان کتاب   ڈاکٹر اعظمی صاحب  کی تحقیق سے قبل  ناباب تھی  قدیم رسم الخط میں اس کے چند نسخے دنیا کی مختلف لائبریریوں میں موجود تھے ۔لیکن ڈاکٹر ضیاء الرحمن  اعظمی ﷾نے جامعہ ازہر ،مصر میں اس  کتاب  گرانقدر کی تحقیق پر پی   ایچ ڈی کی ڈگری حاصل کر کے اس کتاب کو  نئی زندگی بخشی۔ موصوف نے  اس کی تحقیق وتدقیق میں انتہائی محنت اور جانفشانی  سے کام لیا  کتاب میں  وارد شدہ احادث  کی تخریج کی  اور فن  جرح تعدیل ک ےمسلمہ اصولوں کےمطابق ان  کی صحت وعدم صحت  و اضح کیا  اوراس کے ساتھ ساتھ  انہوں نے  ان احادیث سے مستنبط ہونے والے  فقہی اور قانونی احکام کے بارے  میں مختلف فقہی مسالک بھی بیان کردیے ہیں۔ او رکتاب کے آخر میں انہوں نے  استدراکات  کے عنوان سے آنحضور ﷺ کی مزید ان  احادیث وقضایا کا اضافہ بھی کردیا ہے  جو کسی وجہ  سے اصل کتاب میں شام  ہو نے  سے راہ گئے تھے ۔علاوہ ازیں انہوں نے کتاب کے شروع میں ایک مفصل مقدمہ لکھ اسلامی قانون کی اہمیت اور قانون نافذ کرنے  والے  اداروں اور افراد کے کردار او رذمہ داریوں پر بھی  تفصیل سے روشنی  ڈالی ہے ۔ کتاب کے آخر میں  مراجع، اعلام اور  عنوانات کی تفصیلی فہارس کا اضافہ کر کے اس کے  استفادہ کو زیادہ سے زیادہ آسان بنادیا ہے۔ یہ کتاب  قانون دان حضرات اور اسلامی آئین وقانون کے نقاذ سےدلچسپی رکھنے والے  احباب کے لیے ایک نعمت غیر مترقبہ ہے  ادارہ   معارف اسلامی منصورہ نے  تقریبا  28  سال قبل اس کاترجمہ کر وا کر اسے  حسن ِطباعت سےآراستہ کیا ۔اللہ تعالیٰ مصنف ، محقق ،مترجم اور ناشرین کی اس کاوش کوقبول فرمائے اور اس کو  وطن عزیز میں اسلامی آئین وقانون کی تدوین وتفیذ کا ایک  مؤثر ذریعہ بنائے (آمین) (م۔ا)

عناوین

 

صفحہ نمبر

پیش لفظ ۔ مولانا خلیل احمد حامدی

 

9

تعارف۔ الیف الدین ترابی

 

11

مقدمہ

 

17

تمہید

 

18

فصل اول : القضاء فی الاسلام

 

21

قضاء کا مفہوم (لغوی اور شرعی اعتبار سے )

 

21

قضاء کی اہمیت

 

22

قضاء کا بنیادی تقاضا

 

23

رسول اللہ ﷺ کے فیصلوں کے چند نمونے

 

27

سنت میں مذکور آداب قضاء

 

32

رسول اللہ ﷺ کے منفرد کردہ قاضی

 

35

منصب قضاء کے لیے شرائط

 

47

علماء اور منصب قضاء

 

51

فصل دوم : امام ابن الطلاع کے دو رکا اندلس

 

55

اندلس میں علمی ترقی کی تحریک ( پہلی تا پانچویں صدی ہجری)

 

55

امام ابن الطلاع کا معاصرین

 

60

امام ابن الطلاع کاوطن

 

61

فصل سوم : تعارف مؤلف

 

64

ابن الطلاع کادور

 

64

حسب ونسب

 

64

ولادت

 

65

نشوونما

 

65

شیوخ و اساتذہ

 

66

علمی مقام

 

67

علماء کی نظر میں

 

67

مراجع ومآخذ

 

68

ابن الطلاع کی تصانیف

 

69

وفات

 

69

تلامذہ

 

70

فصل چہارم: تعارف کتاب

 

73

کتاب کے مختلف نسخے

 

73

کتاب میں تحقیقی کام

 

74

اقضیۃ رسول اللہ ﷺ

 

77

کتاب الحدود

 

78

قصاص اوردیت کے عمومی احکام

 

83

قتل کے ملزم کوقید میں رکھنے کا حکم

 

93

برسرپیکار کفار کے بارے میں فیصلہ

 

105

قاتل سےاقرار جرم کرانا

 

108

پتھر سے ہلاک کرنےوالے کےبارے میں حکم

 

118

ضرب سے حمل گرنے کے بارے میں حکم

 

123

قاتل کےبارے میں فیصلہ بربنائے حلف

 

126

سوتیلی ماں سے نکاح کرنے والے کے بارے میں فیصلہ

 

135

حضرت ماریہ ؓ کے چچازاد کے قتل کا حکم

 

138

دو بستیوں کے درمیان پائے جانے والے مقتول کے بارے میں حکم

 

139

زخموں کا قصاص

 

141

دانت کا قصاص

 

144

شادی شدہ زانی کے بارے میں حکم

 

147

زانی یہودی کا رجم

 

152

کنواری زانی اور مریض زانی پر حد کا نفاذ

 

159

قذف ، عملِ قوم لوط اور شراب نوشی کی سزائیں

 

166

عادی چور کے بارے میں فیصلہ

 

179

شاتم رسول اور جادوگر کےبارے میں فیصلہ

 

189

کتاب الجہاد

 

200

مشرک مقتول اور مال غنیمت کے بارے میں احکام

 

200

جاسوس کے بارے میں آنحضورﷺکا فیصلہ

 

207

جنگی قیدیوں کے احکام

 

211

بنو قریضہ اور بنو نضیر کا قضیہ

 

223

امان دینے کے احکام

 

235

مال غنیمت میں عورت اور غائب شخص کے حصوں کا حکم

 

251

مقتول کافر کےسامان کاحکم

 

269

مسلمان ہوجانے والے مشرکین کے قبضے میں مسلمانوں کی جائداد کاحکم

 

277

کافروں کے تحائف کاحکم

 

284

مال فے کی تقسیم

 

295

بنو نضیر کے اموال او رخیبر کے مال غنیمت کے بارے میں

 

307

ایفائے عہد اور قاصد سےعدم تعرض

 

313

کسی مسلمان کی طرف سے کافر کو امان دینا

 

319

جزیہ کے احکام

 

331

کتاب النکاح

 

343

بیوہ کی مرضی کے بغیر نکاح کر دینا

 

345

حاملہ سے نکاح کاحکم

 

356

خاوند کی عدم موجودگی میں نفقہ لینے کی اجازت

 

364

مہر کے احکام

 

368

حضرت علیؓ کو ابو جہل کی بیٹی سے نکاح کرنے کی ممانعت

 

373

مسلمان ہونےوالے مجوسی مرد اورعورت کا نکاح

 

375

متعہ کی ممانعت

 

378

رسول اللہ ﷺ کا حضرت میمونہ سے نکاح

 

383

بیویوں سے انصاف

 

386

رضاعی رشتوں کی حرمت

 

393

کتاب الطلاق

 

399

حائضہ کو طلاق دینے کےاحکام

 

401

خلع کےاحکام

 

412

منکوحہ لونڈی کی حیثیت ۔ آزادی کےبعد

 

414

ایک عادل شخص کی گواہی پر عورت کی طلاق کا مسئلہ

 

417

تخییر کامسئلہ

 

418

لونڈی کواپنے اوپر حرام قرار دےدینا

 

422

تین سے کم طلاقیں دینےوالے کےبارے میں حکم

 

430

اولاد کی پرورش کےبارے میں فیصلہ

 

436

ظہار کے بارے میں فیصلہ

 

436

لعان کے بارے میں فیصلہ

 

442

کتاب البیوع

 

451

بیع سلم اور دوسرے معاملات

 

453

بیع کی ناجائز قسمیں

 

467

آفت زدہ فصلوں کے بارے میں فیصلہ

 

481

سودےمیں دھوکہ کھانےوالے کے بارے میں

 

489

کتاب الاقضیہ

 

503

ظاہری دلائل کی بناء پر حقوق کا فیصلہ کرنا

 

505

کیفیت حلف

 

519

بنجر اراضی کی آبادی اور پانی کی تقسیم

 

523

شفعہ

 

533

مشترکہ ملکیت کی تقسیم اور مزارعت کے احکام

 

537

مساقاۃ او ردیگر امور

 

546

کتاب الوصایا

 

553

مال میں وصیت کرنے کا تناسب

 

555

اوقاف

 

561

صدقہ اور ہبہ کے احکام

 

565

مشتبہ چیزوں کے احکام

 

575

مختلف حالات میں غلاموں کےمتعلق احکام

 

583

لقطہ کے احکام

 

597

پورا باغ صدقہ کرنے والے کے بارے میں آنحضورﷺ کی ہدایت

 

609

امانتوں کے بارے میں فیصلہ

 

615

مستعار چیزوں کی ضمان

 

620

میراث کےاحکام

 

626

الولد للفراش

 

639

علم الصیافہ کی حیثیت

 

644

ذوی الارحام کی میراث

 

653

قاتل ، مقتول کاوارث نہیں ہو سکتا

 

657

ولاء کی میراث

 

661

حضرت عائشہ ؓ کی میراث

 

664

شکاری کتوں کے بارے میں احکام

 

676

کنوئیں کے حریم کےبارے میں فیصلہ

 

680

بذریعہ وکیل خرید و فروخت اور اس پر حاصل ہونےوالا نفع

 

684

مختلف معاملات میں نبی کریم کے فیصلے

 

691

نبی کریم ﷺ کے اوامر و نواہی کے بارے میں علماء کا اختلاف

 

698

سرور عالم کا شجرہ نسب

 

706

رسول اکرمﷺ کی تکفین و تدفین

 

715

استدراکات

 

721

کتاب الحدود الدیات

 

723

مقدمہ امام کی عدالت میں پہنچ جانے کی صورت میں حد کا وجوب

 

723

زنا بالجبر میں عورت پر حد قائم نہ ہو گی

 

724

نفاس اور بیماری کی حالت میں عورت کی حد مؤخر کی جائے گی

 

725

چوری کی سزا ( اقرار جرم کی صورت میں )

 

726

چور کا ہاتھ کاٹنے کے بعد داغنا

 

727

وہ اشیا ء جن کی چوری پر ہاتھ نہیں کاٹا جاتا

 

728

رسول اللہ ﷺ کے فیصلے پرراضی نہ ہونے والے کاحکم

 

730

شاتم رسول کے مباح الدم ہونے کا حکم

 

731

وہ امور جن میں قصاص نہیں

 

732

قتل بالحجر کا حکم

 

733

والدسے قصاص نہیں لیا جا سکتا

 

734

دیت کی مقدار نیز مشرک کی دیت کا حکم

 

735

رسول اللہ ﷺ پر افتراء باندھنےوالے کی سزا

 

736

کافر کے قاتل کی سزا

 

737

یک چشم کادوسرے کی آنکھ پھوڑ دینا

 

739

کتاب الجہاد

 

740

مسلمان ہو جانے والے حربی کافر کی حیثیت

 

740

عورتوں کو قتل کرنے کی ممانعت

 

741

غلام کو مال غنیمت میں سے دینے کاحکم

 

742

کتاب النکاح و الطلاق

 

745

یتیم لڑکی کے نکاح کے لیے اجازت لینے کاحکم

 

745

مرض الموت میں نکاح کرنا

 

746

معمولی اشیاء مہر میں دینے کی اجازت

 

747

باپ کے حکم پر بیوی کو طلاق دینا

 

748

وضع حمل کے بعد مطلقہ عورت کی علیحدگی

 

749

حاملہ کی عدت

 

750

عورت کے لیے عدت کہاں گزارنے کا حکم ہے

 

751

غلام کو طلاق کا اختیار دینے کاحکم

 

752

کتاب البیوع

 

754

تنگ دست کو قرض کا کچھ حصہ معاف کر دینے کاحکم

 

754

قدرتی آفات کی وجہ سے اشیاء میں کمی ہوجانا

 

755

غلاموں کی بالغ اولاد کو والدین سے جدا کیا جا سکتا ہے

 

756

دو بھائیوں میں تفریق کا مسئلہ

 

756

تعلیم قرآن کی اجرت کا حکم

 

757

بھاگ جانےوالے اونٹ کے بارے میں حکم

 

757

کتاب الهبة

 

759

بیوی خاوند کی اجازت کے بغیر تحفہ دینے کی مجاز نہیں

 

759

کتاب القضاء

 

761

حکم کے فیصلے پر رسول اللہ ﷺ کی رضا مندی

 

761

اپنے علم کی بنا پر رسول اللہ ﷺ کا فیصلہ

 

762

شہادت فراہم ہونے کی صورت میں رسول اللہ ﷺ کا فیصلہ

 

763

زیر قبضہ اشیاء کا حکم

 

763

حضرت علی﷜ کے فیصلے کی توثیق

 

764

کتاب الفرائض والعتق

 

765

لا ولد شخص کا ترکہ جس کی بہنیں موجود ہوں

 

765

وراثت میں خاوند اور حقیقی بہن کاحصہ

 

766

دیت کی میراث

 

766

آزاد کردہ غلام کی وراثت

 

767

زیر کفالت یتیم کے لیے ایک سواونٹ کی وصیت پر آنحضورﷺ کا فیصلہ

 

768

ام ولد کو فروخت کرنے کی ممانعت

 

769

فہرست المراجع والمصادر

 

771

مصنف کی مزید تصانیف

title-pages-aqziya-al-rasool--saww--urdu-tarjuma-copy

ای میل سبسکرپشن

محدث لائبریری کی اپ ڈیٹس بذریعہ ای میل وصول کرنے کے لئے ای میل درج کر کے سبسکرائب کے بٹن پر کلک کیجئے۔

 

ایڈوانس سرچ

موضوعاتی فہرست

رجسٹرڈ اراکین

آن لائن مہمان

محدث لائبریری پر اس وقت الحمدللہ 199 مہمان آن لائن ہیں ، لیکن کوئی رکن آن لائن نہیں ہے۔

ایڈریس

       99-جے ماڈل ٹاؤن،
     نزد کلمہ چوک،
     لاہور، 54700 پاکستان

       0092-42-35866396، 35866476، 35839404

       0092-423-5836016، 5837311

      KitaboSunnat@gmail.com

      بنک تفصیلات کے لیے یہاں کلک کریں